خان پور، سنیٹری انسپکٹر اور عملے کی ملی بھگت، شہرسیوریج مسائل کا شکار

خان پور، سنیٹری انسپکٹر اور عملے کی ملی بھگت، شہرسیوریج مسائل کا شکار

خان پور(تحصیل رپورٹر)اسسٹنٹ کمشنر خان پور احمد رضا سے سیاسی وسماجی شخصیات محمد نعمان نواز ایڈووکیٹ،اشفاق احمد(بقیہ نمبر25صفحہ12پر )

مغل،راجہ جتوئی سمیت دیگر افراد نے انکے دفتر میں ملا قات کی اور انہیں بتایا کہ اندرون شہر گندگی اور سیوریج کے گندے پانی کے جوہڑوں نے شہریوں کا جینا محال کردیا ہے حتیٰ کہ مساجد میں نماز کی ادائیگی کے وقت نمازیوں اور سکول جاتے طلباء وطالبات کو شدید مشکلات وپریشا نیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے کیونکہ ہر گلی کوچے میں گندگی اور گندا پانی بھرا ہوا ہے ۔انہوں نے محلہ فرید آباد میں سیوریج کے بڑے بڑے گندے پانی کے تالاب کی موجود گی بارے بھی روشنی ڈالی اور کہا کہ شہر کے 5سیکٹرز میں سنیٹری انسپکٹرز نے ملازمین سے ملی بھگت کرکے انہیں کھلی چھوٹ دے رکھی ہے جسکی وجہ سے حالت جوں کی توں ہے۔انہوں نے وضا حت کی کہ سنیٹری انسپکٹرز عملہ سے 5ہزار روپے سے 8ہزار روپے ماہانہ وصول کررہے ہیں ۔راجہ جتوئی نے اسسٹنٹ کمشنر کو بتایا کہ جب سے یونین کونسل 72سی میں رفیق قریشی تعینات ہوا ہے سیوریج کا گندا پانی ہمارے مکانوں کی جڑوں میں گھس کر انہیں کھو کھلا کر چکا ہے جسکی وجہ سے مکانات کے زمین بوس ہونے کا خطرہ ہے جس پر اسسٹنٹ کمشنر احمد رضا نے کہا کہ شہر میں صحت وصفائی کے نظام کی بہتری کیلئے ٹی ایم اے میں شکایات سیل قائم کرنے کا حکم دے دیا ہے،اس سلسلہ میں شہریوں کے تمام مسائل حل ہو جائیں گے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر