سرکاری ڈاکٹر زنجی ہسپتال میں دوران آپریشن خاتون کے پیٹ میں تولیہ بھول گئے

سرکاری ڈاکٹر زنجی ہسپتال میں دوران آپریشن خاتون کے پیٹ میں تولیہ بھول گئے

  

حاصل پور(سپیشل رپورٹر) سرکاری ڈاکٹرز کی مبینہ غفلت اپنے پرائیویٹ ہسپتال میں دوران آپریشن خاتون کے پیٹ میں(بقیہ نمبر52صفحہ12پر )

تولیہ بھول گئے تفصیل کے مطابق سرکاری ڈاکٹرز کی مبینہ غفلت اپنے پرائیویٹ ہسپتال میں دوران آپریشن خاتون کے پیٹ میں تولیہ بھول گئے میڈیکل رپورٹ نے ڈاکٹر کی کارکردگی کا پول کھول دیا ۔ قائم پور کے رہائشی مقدس علی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میں اپنی بیوی ریحانہ بی بی کو ڈلیوری کیس کے لیئے حاصل پور(شفیع ویلفیئر سرجیکل ہسپتال اینڈ میٹرنٹی ہوم ) میں لایا جہاں ڈاکٹر محمد ندیم انجم اورڈاکٹر ثوبیہ بتول نے اپنے پرائیویٹ ہسپتال میں آپریشن کیا اورمیری بیوی کو بیٹا پیدا ہواجس کی بعدازاں موت واقع ہو گئی ۔ ایک ہفتے بعد میری بیوی کے پیٹ میں شدید درد محسوس ہوا تو دوبارہ مذکورہ ڈاکٹر سے رابطہ کیا تو انہوں نے کوئی تعاون نہ کیا بالاآخر میں اپنی بیوی کو بہاولپور ہسپتال لے گیا جہاں پر ڈاکٹروں نے دوران علاج بتایا کہ دوران ڈلیوری مذکورہ ڈاکٹر مریضہ کے پیٹ میں SPONGE (تولیہ)بھول گئے او رانہوں نے آپریشن کرکے مریضہ کے پیٹ سے تولیہ نکالامتاثرہ خاتون ریحانہ بی بی اور اہل خانہ نے وزیراعلیٰ پنجاب سے مذکورہ ڈاکٹر کے خلاف فوری ایکشن لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔ ڈاکٹر سے موقف جاننے کے لیئے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے بات کرنے سے انکار کر دیا۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -