خیبر پختونخوا کے 16 فیڈرز پر لائن لاسزنہ ہونے کی وجہ سے بجلی کی لوڈشیڈنگ نہیں ہوتی: عابد شیر علی

خیبر پختونخوا کے 16 فیڈرز پر لائن لاسزنہ ہونے کی وجہ سے بجلی کی لوڈشیڈنگ نہیں ...
خیبر پختونخوا کے 16 فیڈرز پر لائن لاسزنہ ہونے کی وجہ سے بجلی کی لوڈشیڈنگ نہیں ہوتی: عابد شیر علی

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیر مملکت برائے پانی و بجلی چوہدری عابد شیر علی نے کہا ہے کہ جن علاقوں میں لائن لاسز جتنے زیادہ کم ہوں گے وہاں پر بجلی کیس لوڈشیڈنگ میں بھی کمی ہوگی ۔ لائن لاسز صفر ہونے کی وجہ سے خیبر پختونخوا کے 16 فیڈرز ایسے ہیں جہاں بالکل لوڈ شیڈنگ نہیں ہوتی ۔

سینیٹ کے اجلاس کے دوران اپنے جواب میں وزیر مملکت برائے پانی و بجلی عابد شیر علی کا کہنا تھا کہ ملک میں بجلی کی مجموعی پیدا وار 13 ہزار 500 میگاواٹ ہے جبکہ بجلی کی مجموعی طلب20ہزارمیگاواٹ تک پہنچ گئی ہے ۔ خیبر پختونخوا میں 20 فیصد ریکوری والے فیڈرز پر 20 گھنٹے بجلی کی لوڈ شیڈنگ ہوتی ہے جبکہ 30 فیصدریکوری والے فیڈرزپر 16 گھنٹے لوڈ شیڈنگ کی جاتی ہے اور 70 فیصد سے زائد لائن لاسز والے علاقوں میں 18 گھنٹے لوڈ شیڈنگ ہوسکتی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ لائن لاسز نہ ہونے کی وجہ سے خیبرپختونخوا میں16 فیڈرزایسے ہیں جہاں لوڈشیڈنگ صفرہے اسی طرح خیبر پختونخوا کے وزیراعلیٰ کے فیڈر پر بھی لوڈ شیڈنگ نہیں کی جارہی۔ انہوں نے بتایا کہ خیبر پختونخوا میں 50 فیصد ریکوری پر 12 اور 60فیصد پر 6 گھنٹے لوڈ شیڈنگ کی جارہی ہے ۔ وزیر مملکت کا ایوان میں کہنا تھا کہ سی سی آئی کی منظوری کے نتیجے میں صوبائی حکومتوں کو 4 سال میں 70 ملین اداکئے گئے جبکہ چھوٹے ہائیڈر وپاور منصوبوں کےلئے وفاق نے صوبوں کےلئے فنڈز مختص نہیں کئے۔

مزید : قومی /اہم خبریں