نواز شریف شریف کیخلاف غداری کا مقدمہ، درخواست قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے بارے فیصلہ محفوظ

نواز شریف شریف کیخلاف غداری کا مقدمہ، درخواست قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے ...

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف غداری کے مقدمہ کے اندراج کے لئے دائر درخواست کے قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے کے بارے میں فیصلہ محفوظ کر لیا جبکہ ایک دوسری درخواست میں ترمیم کرنے کی اجازت دے دی ۔پہلی درخواست پاکستان عوامی تحریک کے راہنما خرم نواز گنڈا پور نے دائر کررکھی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ سابق وزیر اعظم کا متنازع انٹرویو ملک کی سلامتی کی منافی ہے، نواز شریف نے بیان دے کر ملک اور قومی سلامتی کے اداروں کو بدنام کیا ہے، درخواست گزار نے دعویٰ کیا کہ نواز شریف کا بیان غداری کے مترادف ہے جو آئین کے آرٹیکل 6کے تحت قابل دست اندازی جرم ہے، درخواست میں استدعا کی گئی کہ وفاقی وزارت داخلہ کو حکم دیا جائے کہ سابق وزیر اعظم نواز شریف کے بیان پر ان کے خلاف آئین کے آرٹیکل 6 کے تحت مقدمہ درج کرے۔دوسری درخواست پاکستان زندہ باد پارٹی کی طرف سے دائر کی گئی تھی ،درخواست گزار تنظیم کے وکیل احمد اویس نے استدعا کی کہ درخواست میں ترمیم کرنے کی اجازت دی جائے،عدالت نے یہ استدعا منظور کرلی ۔

مزید : علاقائی