لاہور ہائیکورٹ نے ایل ڈی اے حکام کو گجر پورہ میں گونگے بہرے کا گھر گرانے سے روک دیا

لاہور ہائیکورٹ نے ایل ڈی اے حکام کو گجر پورہ میں گونگے بہرے کا گھر گرانے سے ...

لاہور(نامہ نگارخصوصی) لاہور ہائیکورٹ نے گجر پورہ سکیم میں گھر کی مسماری کے خلاف دائردرخواست پر ایل ڈی اے حکام کو گونگے بہرے شہری کا گھر گرانے سے روک دیا اور ڈی جی ایل ڈی اے کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا ہے۔جسٹس شمس محمود مرزا نے گجر پورہ سکیم کے رہائشی امین گونگا کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار کی طرف سے عدالت کو بتایا گیا کہ درخواست گزار نے گجر پورہ سکیم میں پلاٹ نمبر 744 بی ٹو خرید کر گھر بنایا لیکن ایل ڈی اے نے پلاٹ پر اپنی ملکیت کا دعوٰی کیا جبکہ سول کورٹ نے بھی ملکیت کے حوالے سے 25 فروری 2016 کو میرے حق میں فیصلہ دیا، سول عدالت کے فیصلے کو ایل ڈی اے نے کسی فورم پر چیلنج نہیں کیا، جبکہ یکم جنوری 1999 کو مکان کی تعمیر کے لیے ایل ڈی اے سے نقشہ بھی منظور کرایا، اب 8 مئی کو ایل ڈی اے نے غیر قانونی قابض کا نوٹس جاری کرکے مکان مسماری گرانے کا حکم جاری کردیا، درخواست گزار نے استدعا کی کہ عدالت ایل ڈی اے کو غیر قانونی اقدام سے روکنے کا حکم دے۔

روک دیا

مزید : علاقائی