امریکہ میں مسلمان بغیر کسی حکومتی رکاوٹ کے آزادنہ ماہ رمضان کا فریضہ انجام دیں: ٹرمپ

امریکہ میں مسلمان بغیر کسی حکومتی رکاوٹ کے آزادنہ ماہ رمضان کا فریضہ انجام ...

واشنگٹن( آن لائن) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے رمضان کی آمد کے موقع پر غیر متوقع طور پر ایک خوشگوار پیغام سامنے آیا ہے، جس میں امریکی مسلمانوں کو مخاطب کر کے انہوں نے کہا ہے کہ مسلمان بغیر کسی حکومتی رکاوٹ کے امریکا میں آزادانہ طور پر رمضان کا فریضہ انجام دے سکتے ہیں۔ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ امریکا میں ہم سب خوش قسمتی سے ایک ایسے آئین کے تحت رہ رہے ہیں جو مذہبی آزادی فراہم کرتا ہے اور مذہبی فرائض کی ادائیگی کا احترام کرتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ہمارا آئین اس بات کی ضمانت دیتا ہے کہ مسلمان رمضان کو اس کی اصل روح کے ساتھ کسی حکومتی رکاوٹ کے بغیر گزاریں، آئین میں دی گئیں ضمانتیں، امریکیوں کو انسانی روح کو گہرائی سے جاننے کے لیے بھی مواقع فراہم کرتی ہیں۔

ٹرمپ نے اس بات کا بھی ذکر کیا کہ مسلمانوں کی اکثریت اس مقدس مہینے میں روزہ رکھتی، فلاحی کاموں میں حصہ لیتی، عبادت اور قرآن پاک کی تلاوت کرتی ہے۔ٹرمپ نے اپنے بیان میں مسلمان برادری کو رمضان مبارک کہتے ہوئے کہا کہ رمضان ہمیں امریکی زندگی کے مذہبی رنگوں میں مسلمانوں کے رنگ کی یاد دلاتا ہے۔

واشنگٹن(صباح نیوز)امریکی وزیرِ خارجہ مائیک پومپیو نے کہا ہے کہ رمضان المبارک مستحق افراد کی اعانت کرنے اور معاشرے میں محبتیں بانٹنے کا مہینہ ہے۔ امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے مسلمانوں کے مقدس مہینے کی آمد پر مبارک باد دیتے ہوئے کہا کہ میں اس ماہ کے آغاز کے موقع پر عالم اسلام کے لیے ایک بہت بابرکت اور پر امن رمضان کی خواہشات کا اظہار کرتا ہوں اور ماہ صیام کے موقع پر دنیا بھر کے مسلمانوں کے لیے دعا گو ہوں۔امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ رمضان المبارک کا مہینہ روحانی تزکیے، مالی امداد اور عجز و انکساری کا نام ہے جس میں خاندان اور دوستوں کے درمیان روابط بحال ہوتے ہیں اور غربا کی امداد کی حوصلہ افزائی کی جاتی ہے۔

مائیک پومپیو

مزید : علاقائی