احمد شہزاد اور عمر اکمل کو کیوں نظر انداز کیا گیا:عبدالقادر

احمد شہزاد اور عمر اکمل کو کیوں نظر انداز کیا گیا:عبدالقادر

لاہور(سپورٹس رپورٹر)سابق ٹیسٹ کرکٹر عبدالقادر نے بابر اعظم کو مستقبل کا کپتان قرار دے دیا۔ سابق ٹیسٹ کرکٹر عبدالقادر نے کہا کہ مصباح الحق اور محمد حفیظ کے دور میں قومی ٹیم کیلیے نائب کپتان مقرر کرنے کی ضرورت ہی محسوس نہیں کی گئی، پی سی بی کو مستقبل کا کپتان تیار کرنے کیلیے پالیسی متعارف کرانا چاہیے۔ایک سوال پر انھوں نے کہا کہ محمد حسنین کو انٹرنیشنل کرکٹ کیلیے تیار کرنے کے بجائے براہ راست سکواڈ میں شامل کرنا جلدبازی ہے، وہاب ریاض بھی حسنین کی طرح تیز بولنگ کر سکتے اور تجربہ کار بھی ہیں، ورلڈ کپ کیلیے سینئر پیسر کو ترجیح دینا چاہیے تھی۔عبدالقادر نے کہا کہ پی سی بی کی جانب سے باصلاحیت کرکٹرز کو نظر انداز کرنا سمجھ سے بالاتر ہے، پی ایس ایل میں مسلسل عمدہ کارکردگی کے باوجود احمد شہزاد اور عمر اکمل کو کیوں نظر انداز کیا گیا؟ ڈومیسٹک کرکٹ کے کئی ٹاپ پرفارمرز بھی سلیکٹرز کی نظرکرم کے مستحق نہ ٹھہرے، اگر کسی کو موقع نہیں دینا تو اس طرح کے ایونٹس کرانے کا کوئی فائدہ نہیں ہے۔

انھوں نے کہا کہ عمر اکمل اور کامران اکمل جیسے بیٹسمین پاور ہٹر کا کردار ادا کرتے ہوئے تن تنہا میچ کا نقشہ بدل سکتے ہیں لیکن ان کو منتخب کرنے کی ضرورت ہی محسوس نہیں کی گئی۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی