اسلام آباد میں وہ چیز جسے استعمال کرنے پر حکومت نے پابندی عائد کر نے کا فیصلہ کر لیا

اسلام آباد میں وہ چیز جسے استعمال کرنے پر حکومت نے پابندی عائد کر نے کا فیصلہ ...
اسلام آباد میں وہ چیز جسے استعمال کرنے پر حکومت نے پابندی عائد کر نے کا فیصلہ کر لیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )اسلام آباد میں 14 اگست سے پلاسٹ بیگ کے استعمال پر پابندی عائد کر نے کا فیصلہ کر لیا گیاہے جبکہ وفاقی دارلحکومت میں پلاسٹگ بیگ کی روک تھام کیلئے قواعد بنا لیے گئے ہیں ۔

نجی ٹی وی اے آر وائے نیوز کی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ماحولیاتی تبدیلیوں سے متعلق اہم اجلاس ہواجس میں مشیر ماحولیات، وزیر فوڈ سیکیورٹی ، وزیر منصوبہ بندی ، مشیر تجارت ، معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے شرکت کی جبکہ اس کے علاوہ وزرائے اعلیٰ خیبر پختون خواہ ، بلوچستان اور گلگت بلتستان ، وزیراعظم آزاد کشمیر اور افسران بھی شریک تھے ۔

اجلاس کے دوران وزیراعظم عمران خان کوپنجاب میں سموگ کی روک تھام اور اقدامات ، 10 ارب درخت لگانے کے منصوبے پر پیشرفت سے متعلق بریفنگ دی گئی ۔حکومت نے ملک میں بجلی پر چلنے والی کاریں متعارف کروانے پر غور شروع کر دیاہے اوراس حوالے سے عمران خان کو اجلاس میں الیکٹر وہیکل پالیسی پر بھی بریفنگ دی گئی جس دوران مشیر ماحولیات اور وزیر توانائی نے تجاویز پیش کیں ۔ الیکٹرک کاروں پر پالیسی فریم ورک پر دو ماہ میں پیشرفت کا امکان ہے ۔ الیکٹر کاروں کے مینوفیکچرنگ یونٹ پاکستان میں لگائے جائیں گے اور تجربہ کامیاب رہا تو ایکسپورٹ کا لائحہ عمل بھی تیار کیا جائے گا جبکہ الیکٹر کاروں پر درآمدی ڈیوٹی صفر کرنے اور مراعات پر بھی غور کیا گیا ۔ 2022 تک متعدد کارساز کمپنیاں الیکٹرک کاروں کی تیاری بڑھا دیں گی جبکہ کئی ممالک تین سال میں 30 فیصد تک بجلی پر چلنے والی گاڑیوں کا استعمال شروع کریں گے ۔

مزید : قومی