تحقیق جاری،کوروناکے کسی علاج کی تاحال منظوری نہیں دی گئی،ڈبلیو ایچ او

  تحقیق جاری،کوروناکے کسی علاج کی تاحال منظوری نہیں دی گئی،ڈبلیو ایچ او

  

جنیوا (شِنہوا)عالمی ادارہ صحت(ڈبلیو ایچ او)نے کہاہے کہ کوروناکے علاج کے لئے کئی ایک علاج طبی آزمائش کے مرحلہ میں ہیں تاہم ان میں سے ابھی تک کسی کی بھی منظوری نہیں دی گئی۔ ڈبلیو ایچ او کے ہیلتھ ایمرجنسی پروگرام کی ٹیکنیکل سربراہ ماریا وان کیرخوونے جنیوا میں پریس کانفرنس میں کہا کہ اس وقت سینکڑوں کلینکل ٹرائلز ہورہے ہیں اور ہمارے لئے ان تحقیقی کاموں کے نتائج کا انتظار کرنا اس لئے بھی ضروری ہے کہ اس چیز کا اندازا لگایا جارہا ہے کہ یہ ادویات انفیکشن سے بچاو کے لئے کیسے کام کرتی ہیں، مہلک امراض کی شدت میں اضافے کو کیسے روکتی ہیں،موت سے کیسے بچاو کرتی ہے کس قدر محفوظ ہیں اور کیا ان کے سائیڈ ایفیکٹس بھی ہیں یہ جاننے کے لئے کام ہورہا ہے۔انہوں نے بتایا کہ اس وقت ڈبلیو ایچ او نے سولیڈیرٹی ٹرائل کا آغاز کیا ہے جو ایک کلینیکل ٹرائل ہے جس میں کچھ دوا اور کچھ علاج معالجے کے کوروناکے لئے محفوظ اور موثر ہونے یا نہ ہونے کا جائزہ لیاجارہا ہے۔ اس ٹرائل میں مختلف جگہوں پر2ہزار500مریض داخل ہیں۔ مکمل جوابات حاصل کرنے میں کچھ وقت لگے گا کہ کون سا علاج کام کرتا ہے، لیکن فی الحال ہمارے پاس کوروناکے لئے کوئی منظور شدہ علاج نہیں ہے۔

ڈبلیو ایچ او

مزید :

صفحہ اول -