خصوصی عدالتوں میں ججوں کی تعیناتیاں نہ ہونے سے اہم کیس التوا کا شکار

خصوصی عدالتوں میں ججوں کی تعیناتیاں نہ ہونے سے اہم کیس التوا کا شکار

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)پنجاب میں وفاق کے زیرانتظام 7خصوصی عدالتوں میں 2 ماہ بعد بھی ججوں کی تعیناتیاں نہ ہوسکیں،ان میں 2 احتساب عدالتیں بھی شامل ہیں،ذرائع سے معلوم ہواہے کہ ان عدالتوں میں ججوں کے تقررکے لئے لاہورہائی کورٹ کی طرف سے نام بھجوائے جاچکے ہیں اس کے باجود وفاقی وزارت قانون کی طرف سے نوٹیفکیشن جاری نہیں ہورہاجس کے باعث بھاری تعداد میں مقدمات التواء کا شکار ہیں،لاہورہائی کورٹ کی طرف سے لاہورکی احتساب عدالت نمبر 3 لاہور میں تقررکے لئے سیشن جج اکمل خان جبکہ احتساب عدالت نمبر 4لاہور میں تعیناتی کے لئے سیشن جج سجاد احمد کا نام وفاق کو بھجوایاجاچکاہے،سپیشل کورٹ سنٹرل تھری لاہور، بینکنگ کورٹ نمبر ایک لاہور،بینکنگ کورٹ نمبر4لاہوراوربینکنگ کورٹ نمبر 7لاہورمیں بھی جج تاحال مقررنہیں ہوسکے ہیں،لاہورہائیکورٹ نے سیشن جج وسیم اختر کی بینکنگ کورٹ نمبر ایک میں تعیناتی کے لئے نام بھجوارکھاہے،بینکنگ کورٹ نمبر 4 لاہور میں جج کی آسامی مارچ 2020 سے خالی ہے،اس عدالت میں تعیناتی کے لئے سیشن جج محمد ساجد علی جبکہ بینکنگ کورٹ نمبر 7کے لئے سیشن جج غلام مرتضیٰ کے نام وفاقی وزارت قانون کے پاس پہنچ چکے ہیں، وفاقی وزارت قانون کی طرف سے تاحال ان تعیناتیوں کے حوالے سے کوئی نوٹیفکیشن جاری نہیں کیاگیا۔

ججز تعیناتیاں

مزید :

صفحہ آخر -