محکمہ خوراک نے مصنو عی گرانفروشی پر26 افراد کوگرفتار کرلیا

محکمہ خوراک نے مصنو عی گرانفروشی پر26 افراد کوگرفتار کرلیا

  

پشاور(سٹی رپورٹر) محکمہ خوراک نے مصنوعی گرانفروشی پیدا کرنے پر مزید26 افراد کو گرفتار کرلیا۔ صوبائی وزیر خوراک الحاج قلندرلودھی اور ڈائریکٹر محکمہ خوراک خیبر پختونخوا محمد زبیر خان کی خصوصی ہدایت پر زیرنگرانی راشننگ کنٹرولر آفتاب عمر، اسسٹنٹ فوڈ کنٹرولر تسبیح للہ اور فوڈ انسپکٹرز محسن علی شاہ اور وحید یوسف نے چمکنی‘ لطیف آباد‘ افغان کالونی‘ چارسدہ روڈ اورشاہ قبول میں فوڈ پوائنٹس سے عام شہری کے بھیس میں خریداری کی اور معیار کو چیک کیا سرکاری نرخنامے سے تجاوز کرنے پر 7 افراد کیخلاف متعلقہ تھانوں میں مراسلے جمع کئے جبکہ اسسٹنٹ فوڈ کنٹرولر واجد علی نے یکہ توت اور پھندو کے حدود میں کارروائیاں کرتے ہوئے 9 افراد کو دھرلیا۔ گرفتار افراد میں نانبائی‘ بیکری مالکان‘ قصاب‘ دودھ فروش‘ سبزی و پھل فروش اور دیگر شامل ہیں۔ ڈائریکٹر محکمہ خوراک خیبر پختونخوا محمد زبیر خان نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ خوراک کی جانب سے ضلع بھر میں کارروائیاں دھڑلے سے جاری ہیں تاکہ شہریوں کو ریلیف فراہم کرنے سمیت معیاری خوراک کی فراہمی یقینی ہو سکے۔ انہوں نے مزید کہا کہ شہریوں کی جانب سے سٹیزن پورٹل پر شکایات درج کرنا احسن اقدام ہے تاکہ اس پر بروقت کارروائی عمل میں لائی جائے اور شہریوں کو سرکاری نرخ کے مطابق اشیائے خوردونوش فراہم ہو۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -