بی آر ٹی کے مزدوروں کا 4 ماہ کی تنخواہیں نہ ملنے پر احتجاج،کنٹریکٹر کے گارڈز کا مزدوروں پر تشدد و ہوائی فائرنگ

بی آر ٹی کے مزدوروں کا 4 ماہ کی تنخواہیں نہ ملنے پر احتجاج،کنٹریکٹر کے گارڈز ...
بی آر ٹی کے مزدوروں کا 4 ماہ کی تنخواہیں نہ ملنے پر احتجاج،کنٹریکٹر کے گارڈز کا مزدوروں پر تشدد و ہوائی فائرنگ

  

پشاور(ڈیلی پاکستان آن لائن) بی آرٹی پشاورپرکام کرنے والی کنسٹرکشن کمپنی کولاہور میں بھی ٹھیکہ مل گیاہے،بی آر ٹی کے مزدوروں نے 4 ماہ کے بقایاجات اور تنخواہیں نہ ملنے پر احتجاج کیا جس پر کنٹریکٹر کے گارڈز نے مزدوروں کو تشدد کو نشانہ بنایا اور ہوائی فائرنگ کردی۔

نجی ٹی وی جیو نیوز کے مطابق بی آر ٹی کے مزدوروں نے 4 ماہ کے بقایا جات و تنخواہیں نہ ملنے پر کنٹریکٹر عثمان شیخ کیخلاف احتجاج کیا،پولیس کے مطابق کنٹریکٹر عثمان شیخ بھاری مشینری دوسرے پراجیکٹ کےلئے لاہورلے جارہا تھااس پر مزدوروں نے احتجاج کرتے ہوئے کہاکہ ہماری 4 ماہ کی تنخواہیں اور بقایا جات ادا کئے جائیں اس کے بعد آپ مشینری کو لے جا سکتے ہیں ۔اس پر کنٹریکٹر کے گارڈ نے مزدور پر تشدد کیا اور ہوائی فائرنگ کی جس پر مزدور سیخ پا ہو گئے اور روڈ بلاک کردیا۔

اس پر پولیس موقع پر پہنچ گئی اور دونوں کے درمیان مذاکرات کرائے اور یہ طے پایا کہ 2 ماہ کی تنخواہ فوری ادا کی جائے گی جبکہ 2 ماہ کی تنخواہ بعد میں ادا کی جائے گی تب تک کنٹریکٹر مشینری نہیں لے جائے گا۔کنٹریکٹر نے جرمانے کے طورپردنبہ بھی پیش کیا۔

نجی اخبار جنگ نیوز کے مطابق  بی آرٹی پشاورپرکام کرنے والی کنسٹرکشن کمپنی کولاہور میں بھی ٹھیکہ مل گیاہے۔ ایل ڈی اے نے فردوس مارکیٹ انڈر پاس کا ٹھیکہ مقبول ایسوسی ایٹس کو دے دیا ہے۔ مقبول ایسوسی ایٹس نے منصوبے پرسب سے کم بڈ دی تھی۔سالوں میں بی آرٹی پشاورمکمل نہ کرسکنے والی کنسٹرکشن کمپنی کو ایل ڈی اے نے کم بڈ کا جواز پیش کرتے ہوئے ٹھیکہ دیا،ذرائع کے مطابق فردوس مارکیٹ انڈر پاس منصوبے کی بنیادی لاگت ایک ارب 9 کروڑ رکھی گئی۔این ایل سی نے ایک ارب 2 کروڑ 49 لاکھ 76 ہزار 140 اور حبیب کنسٹرکشن سروسز نے 99 کروڑ 69 لاکھ 70 ہزار 984 روپے جبکہ مقبول ایسوسی ایٹس نے سب سے کم 97 کروڑ ایک لاکھ 31 ہزار 267 کی بڈ دی۔

مزید :

علاقائی -خیبرپختون خواہ -پشاور -