ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی پربلاول بھٹو پھٹ پڑے ، وزیراعظم کو کھری کھری سنا دیں

ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی پربلاول بھٹو پھٹ پڑے ، وزیراعظم کو کھری کھری سنا ...
ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی پربلاول بھٹو پھٹ پڑے ، وزیراعظم کو کھری کھری سنا دیں

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے عید کے دنوں میں ہونے والی ہوشربا مہنگائی کے حوالے سےتحریک انصاف( پی ٹی آئی) حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ نااہل وزیراعظم اپنی پوری قوت لگا کر بھی رمضان میں مہنگائی قابو کرنے میں ناکام رہے اور عید پر بھی عوام کو ریلیف نہ دے سکے۔

میڈیا سیل بلاول ہاؤس سے جاری اپنے ایک بیان میں چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ عید پر 30 فیصد تک مہنگے کپڑے اور جوتے خرید کر عام آدمی سمجھ چکا ہے کہ عمران خان کی تبدیلی ایک فراڈ تھی، پی ٹی آئی حکومت نے عوام کی قوت خرید پر تبدیلی کا وہ کاری وار کیا ہے کہ عوام کی عید پھیکی پڑگئی،عوام کو مہنگائی کے رحم و کرم پر چھوڑ کر وزیراعظم پابندی کے باوجود عید کی چھٹیاں منانے نتھیاگلی پہنچ گئے۔

چیئرمین پی پی پی کا  کہنا تھا کہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے فروخت کم ہونے کے باوجود گوشت کی قیمتوں میں 200 روپے فی کلو تک کا اضافہ عمران خان کی حکومت کی ناکامی ہے، مرغی کے گوشت کی قیمت 600 روپے فی کلو تک پہنچا کر عمران خان عام آدمی سے عید کی چھوٹی چھوٹی خوشیاں تک چھین چکے ہیں جبکہ عید پر 200 روپے فی کلو مہنگی مٹھائی خرید کر عام آدمی نے دراصل تبدیلی کی ایک بھیانک قیمت ادا کی ہے۔

بلاول بھٹو زرداری نے عمران خان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم صاحب! 150 روپے فی کلو تک دودھ اور 50 فیصد تک مہنگے میوہ جات خریدنے والا عام آدمی پی ٹی آئی کی حکومت سے بدظن ہوچکا ہے، عمران خان کی حکومت نے کاسمیٹکس اور جیولری کی اشیا کی قیمتوں میں 50 فیصد تک اضافہ کرکے ایک عام گھرانے کو عید کی خوشیوں سے محروم کرنے کی کوشش کی، بینظیر انکم سپورٹ کو احساس پروگرام کا نام دے کر واہ واہ سمیٹنے والے وزیراعظم کو خبر ہی نہیں کہ عید پر بچوں کے مہنگے کپڑے خریدنے والے عام آدمی پر کیا گزری۔چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے سوال اٹھایا کہ رمضان اور عید پر اعلانات کے باوجود عمران خان مہنگائی کے خاتمے کیلئے کچھ نہ کرسکے، عام دنوں میں عوام کا کیا حال کریں گے۔

مزید :

قومی -