اشرف غنی کا دورہ خوش آئند،امریکی موجودگی تک اچھائی کی توقع نہیں رکھی جا سکتی،عسکری و سیاسی ماہرین

اشرف غنی کا دورہ خوش آئند،امریکی موجودگی تک اچھائی کی توقع نہیں رکھی جا ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

                          لاہور(محمد نواز سنگرا)اشرف غنی افغانستان کی معاشی بحالی کےلئے کام کر رہا ہے۔خطے میں قیام امن کےلئے افغان صدر دوراہ پاکستان نہایت اہمیت کا حامل ہے۔افغانستان امریکہ اور بھارت کے چنگل سے نکل کر پاکستان کے ساتھ بہتر تعلقات استوا ر کر کے معاشی بحالی اور خطے میں قیام امن میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے۔عدم اعتماد کی فضا کو خوشگوار بنانا بہت ضروری ہے ان خیالات کا اظہار ملک کے سیاسی اور عسکری ماہرین نے روز نامہ پاکستان سے کرتے ہوئے کیا ہے۔سابق وفاقی وزیر نظر محمد گوندل نے کہا کہ موجودہ سٹریٹجک پوزیشن نے حوالے سے اشرف غنی کا دوراہ پاکستان بے پناہ اہمیت کا حامل ہے کیونکہ پاکستان اور افغانستان ایک دوسرے کے سٹیک ہولڈر ہیں۔دونوں ممالک کو ملک بیٹھ کر ڈائیلاگ کے ذریعے مسائل کا حل نکالنا چاہیے اور عدم عتماد کی فضا کو خوشگوار بنا کر بارڈر کی صورتحال بہتر بنانی چاہیے۔جماعت اسلامی کے سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کہا کہ اشرف غنی صنعتکار اور سفارتکار شخص ہے جس کا دورہ خوش آئند ہے لیکن افغانستان میں امریکہ کہ موجودگی تک اچھائی کی توقع نہیں رکھی جا سکتی اور امریکہ کی سرپرستی میں ہونےوالے انتخابات کی صورت میں منتخب ہونے والے صدر کو تمام افغانی عوام کی حمایت حاصل نہیں ہے۔مسلم لیگ (ن)کے رہنما رانا افضل خان نے کہا کہ حکومت خطے میں قیام امن کےلئے بھر پور کوششیں کر رہی ہے جس حوالے سے اشرف احمد غنی کا دوراہ نیک شگون ثابت ہو گا کیونکہ دونوں ممالک کو درپیش مسائل ایک جیسے ہیں جن کے حل کےلئے سربراہاں کا مل کر بیٹھنا ضروری ہے۔جنرل(ر)راحت لطیف نے کہا کہ اشرف احمد غنی ورلڈ بنک میں کام کر چکا ہے اور صدارت کا عہدہ سنبھالنے کے بعد چین اور پاکستان کے دورے سے ظاہر ہوتا ہے کہ افغان صدر ملک میں معاشی بحالی کے منصوبے پر عمل پیرا ہیں۔سیکیورٹی فورسز کی تربیت سمیت دیگر منصوبوں کو فرینڈلی انداز سے آگے بڑھانا چاہیے۔پاکستان کوسازگار ماحول فراہم کرنا چاہیے تاکہ افغانستان امریکہ اور بھارت پر پاکستان کو ترجیح دے۔پاک افغان تعلقات میں امریکہ رکاوٹ نہیں بنے گا کیونکہ امریکہ سمجھتا ہے کہ دونوں ہمسایہ ممالک کے بہتر تعلقات تک خطے میں امن قائم نہیں ہو سکتا۔برگیڈئیر (ر)محمد یوسف نے کہا کہ افغانستان اور پاکستان کی عوام ایک دوسرے سے بے پناہ محبت کرتے ہیں لیڈروں کو بھی قریب آتے ہوئے تضادات ختم کرنے چاہیں اور دوریاں ڈالنے والوں کا متحد ہو کر سامنا کرنا چاہیے۔اشرف احمد غنی کا دوراہ اختلافات ختم کرنے میں کردار ادا کرے گا۔

مزید :

صفحہ اول -