مولانا عبدالعزیزامن وامان اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے لیے شدید خطرہ ،گہری نظر رکھی جائے :وزار ت داخلہ کا مراسلہ

مولانا عبدالعزیزامن وامان اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے لیے شدید خطرہ ،گہری ...
مولانا عبدالعزیزامن وامان اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے لیے شدید خطرہ ،گہری نظر رکھی جائے :وزار ت داخلہ کا مراسلہ

  

اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی حکومت نے قانون نافد کرنے والے اداروں اور خفیہ ایجنسیوں سے کہا ہے کہ وہ لال مسجد کے سابق خطیب مولانا عبدالعزیز کی سرگرمیوں پر  کڑی نظر رکھیں , ان کی سرگرمیاں امن وامان اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے لیے شدید خطرہ ہیں۔نجی ٹی وی کے مطابق وزارت داخلہ کی طرف سے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو لکھے گئے خط میں کہا گیا ہے کہ لال مسجد کے سابق خطیب وفاقی دارالحکومت میں امن وامان کی صورت حال خراب کرنے کی ایک تاریخ رکھتے ہیں، ان کے عجیب وغریب رویے سے بین الاقوامی برادری میں ملکی تشخص خراب ہونے کے ساتھ مشکوک سرگرمیاں بھی شہر میں بدامنی کا باعث بن سکتی ہیں۔دوسری طرف وفاقی دارلحکومت کی انتظامیہ کی طرف سے مولانا عبدالعزیز کو دی جانے والی سیکیورٹی واپس لینے پر لال مسجد کے سابق خطیب نے حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ انتظامیہ انھیں نجی سکیورٹی گارڈ بھی رکھنے کی اجازت نہیں دے رہی۔

مزید : اسلام آباد