ٹیکس دیئے بغیر ترقی ممکن نہیں،کاروباری افراد شناختی کارڈ کی شرط سے نہ گھبرائیں:حفیظ شیخ

ٹیکس دیئے بغیر ترقی ممکن نہیں،کاروباری افراد شناختی کارڈ کی شرط سے نہ ...

  



کراچی(این این آئی) مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ نے کہا ہے کہ کاروباری افراد شنا ختی کارڈدینے کی شرط سے نہ گھبرائیں، ٹیکس دیے بغیر ترقی ممکن نہیں، مشکل فیصلے کرنے پڑتے ہیں،معاشی بہتری کے لیے صنعت کاروں اور برآمد کنندگان کو سبسڈی دے رہے ہیں، حکومت معیشت کی بہتری  کے لیے اداروں کو مضبوط کر رہی ہے،بین الاقوامی مالیاتی ادرے (آئی ایم ایف) نے ہماری اصلاحات کے عمل  پر اعتماد کااظہارکیا ہے۔ہفتہ کواوور سیز چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں خطاب کرتے ہوئے مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ نے کہاکہ مشکل معاشی صورتحال پرقابو پا لیا اور وزیر اعظم ملکی معیشت کی بہتری کے لیے دن رات کوشاں ہیں۔انہوں نے کہا کہ کاروباری افراد شنا ختی کارڈدینے کی شرط سے نہ گھبرائیں، ٹیکس دیے بغیر ترقی ممکن نہیں، مشکل فیصلے کرنے پڑتے ہیں، اعداد و شمار کو دستاویز پر لانے تک ٹیکس نظام میں بہتری نہیں ہو سکتی۔انہوں نے کہاکہ پاورسیکٹر میں 250 ارب روپے خرچ کر رہے ہیں جب کہ صنعتکاروں اور برآمد کنندگان کوسبسڈی دے رہے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ آئی ایم ایف نے ہمارے اصلا حات کے پلان پراعتماد کااظہار کیا، گزشتہ 4ماہ سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ نہیں کیا جب کہ 4ماہ سے اسٹیٹ بینک سے کوئی قرض نہیں لیا اورکرنٹ اکاؤنٹ خسارہ کم کیا ہے،یہاں تک کہ ہمارے اسٹاک مارکیٹ میں نمایاں بہتری دیکھنے میں آئی ہیمشیرخزانہ  نے توانائی کے شعبے میں سرمایہ کاری کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ توانائی کے شعبے کی ترقی کیلئے تقریبا دو سو پچاس ارب روپے خرچ کیے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ محصولات جمع کرنے کا ادارہ  یعنی ایف بی آر میں اصلاحات کررہے ہیں، ٹیکس نظام میں بہتری آئی ہے۔ مشکل معاشی صورتحال پر قابو پالیاگیا ہے۔

حفیظ شیخؒ

مزید : صفحہ اول