ماہرین نے پیغام بھیجنے کے لئے ٹیکسٹ میسج کی بجائے واٹس ایپ استعمال کرنے کا سب سے حیرت انگیز فائدہ بتادیا

ماہرین نے پیغام بھیجنے کے لئے ٹیکسٹ میسج کی بجائے واٹس ایپ استعمال کرنے کا سب ...
ماہرین نے پیغام بھیجنے کے لئے ٹیکسٹ میسج کی بجائے واٹس ایپ استعمال کرنے کا سب سے حیرت انگیز فائدہ بتادیا

  



نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) ایس ایم ایس پیغام رسانی کا روایتی طریقہ ہے جو واٹس ایپ اور دیگر بے شمار آن لائن میسجنگ سروسز آ جانے کے باوجود آج بھی بہت مقبول ہے تاہم اب سکیورٹی ماہرین نے ایس ایم ایس کے متعلق ایک سنگین وارننگ دے دی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق ماہرین کاکہنا ہے کہ ایس ایم ایس کے سسٹم میں کئی خامیاں موجود ہیں جن کا ہیکرز باآسانی فائدہ اٹھا سکتے ہیں اور لوگوں کی باہم پیغام رسانی کو پڑھ سکتے ہیں۔ ایس ایم ایس کا ڈلیوری پراسیس ہی ہیکرز کو یہ صلاحیت دیتا ہے کہ وہ پیغامات تک رسائی حاصل کر سکیں۔

ماہرین کے مطابق ہیکرز ایس ایم ایس میں بھیجے جانے والے نہ صرف پیغامات پڑھ سکتے ہیں بلکہ ٹائم سٹیمپ بھی دیکھ سکتے ہیں اور یہ بھی معلوم کر سکتے ہیں کہ یہ پیغام کس نے بھیجا اور کس کو بھیجا۔انکرپٹڈ سروسز مہیا کرنے والی فرم ’وِکر‘ کے سی ٹی او کرسٹوفر ہوویل نے لوگوں کو مشورہ دیا کہ اس خطرے سے بچنے کے لیے حتی الامکان ایس ایم ایس کی سروس استعمال نہ کریں۔ اس کی بجائے واٹس ایپ اور دیگر ایسی سروسز استعمال کریں جن میں ’اینڈ ٹو اینڈ انکریشن‘ کا سسٹم ہے اور ہیکرز کے لیے ان سروسز کے پیغامات تک رسائی حاصل کرنا لگ بھگ ناممکن ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /سائنس اور ٹیکنالوجی