خورشید شاہ مہاجر کو گالی کہنے پر معافی مانگیں، ہم 80 فیصد متروکہ سندھ کے مالک ہیں: حیدر عباس رضوی

خورشید شاہ مہاجر کو گالی کہنے پر معافی مانگیں، ہم 80 فیصد متروکہ سندھ کے مالک ...
خورشید شاہ مہاجر کو گالی کہنے پر معافی مانگیں، ہم 80 فیصد متروکہ سندھ کے مالک ہیں: حیدر عباس رضوی

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) متحدہ قومی موومنٹ کے رہنماءحیدر عباس رضوی نے کہا ہے کہ خورشید شاہ مہاجر کو گالی کہنے سے متعلق بیان واپس لیں اور مہاجر قوم سے معافی مانگیں۔ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے حیدر عباس رضوی کا کہنا تھا کہ سندھ میں تعصب کی آگ بھڑکانے کی کوشش کی جاتی ہے اور بیانات دیئے جاتے ہیں، خورشید شاہ نے لفظ مہاجر کو گالی قرار دیا ، ان کا بیان سندھ کو مستحکم کرنے کیلئے نہیں ، خورشید شاہ مہاجر کے لفظ کو گالی قرار دینے پر معافی مانگیں۔ انہوں نے کہا کہ خورشید شاہ کہتے ہیں کہ مہاجر کیمپوں اور جھونپڑیوں میں رہتے ہیں، خورشید شاہ صاحب! اسلام میں مہاجروں کو اہم مقام دیا گیا ہے اور ہم پاکستان میں مہاجر ہیں پناہ گزین نہیں، کیمپوں میں مہاجر نہیں بلکہ پناہ گزین رہتے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ہم 80 فیصد متروکہ سندھ کے مالک ہیں جو جاگیرداروں اور وڈیروں کے قبضے میں ہے، سندھ کی ایک کروڑ ایکڑ زمین جاگیرداروں کے قبضے میں ہے، خورشید شاہ سے یہاں رہنے کی اجازت کس نے طلب کی ہے؟ہماری زمین پر تو آپ غاصب ہیں۔

حید عباس رضوی کا کہنا تھا کہ لفظ مہاجر قرآن مجید میں کئی بار آیا اور آج اس لفظ کو گالی بنا کر پیش کیا جا رہا ہے، خورشید شاہ کو کس نے حق دیا کہ وہ مہاجروں کو گالی دیں، شاہ صاحب سوچیں! اپنے اجداد کے بارے میں کیا کہہ رہے ہیں، آصف علی زرداری اور بلاول بھٹو زرداری بھی اس بیان پر ضرور سوچیں، آپ کی صفوں سے گالی آنا لمحہ فکریہ ہے۔

مزید : قومی /اہم خبریں