ہمسائے نے پورے خاندان کو 9 سال تک خفیہ کمرے میں قید رکھا، لیکن کیوں؟ تاریخ کی انوکھی ترین واردات

ہمسائے نے پورے خاندان کو 9 سال تک خفیہ کمرے میں قید رکھا، لیکن کیوں؟ تاریخ کی ...
ہمسائے نے پورے خاندان کو 9 سال تک خفیہ کمرے میں قید رکھا، لیکن کیوں؟ تاریخ کی انوکھی ترین واردات

  



ایمسٹرڈیم(مانیٹرنگ ڈیسک) یورپی ملک نیدرلینڈز سے گزشتہ روز خبر آئی تھی کہ ایک باپ نے اپنے 6بچوں کو 9سال تک اپنے فارم ہاﺅس پر قید کیے رکھا اور وہ سب قیامت کے انتظار میں تھے۔ تاہم اب اس خبر میں ایک نیا موڑ آ گیا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق پولیس کی تحقیقات میں پتا چلا ہے کہ 6لوگوں کو فارم ہاﺅس میں قید رکھنے والا 58سالہ شخص ان کا باپ نہیں بلکہ ہمسایہ تھا، جس نے اس 6افراد کی فیملی کو انہی کے فارم ہاﺅس میں قید کررکھاتھا۔ پولیس نے اس شخص کا نام جوزف برنر بتایا ہے۔یہ فارم ہاﺅس نیدرلینڈز کے دارالحکومت ایمسٹرڈیم سے 60میل کے فاصلے پر واقع قصبے روئنروولڈ کے قریب واقع تھا۔

رپورٹ کے مطابق یہ 6نوجوان لڑکے لڑکیاں بہن بھائی ہیں۔ تاحال ان کے ماں باپ کے متعلق کوئی سراغ نہیں مل سکا کہ وہ کہاں گئے۔ پولیس نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ جوزف برنر نے ان دونوں کو قتل کرکے فارم ہاﺅس میں ہی دفن کر دیا ہو گا تاہم اصل حقیقت بعد میں سامنے آئے گی۔ یہ انسانیت سوز واردات اس وقت سامنے آئی جب ان 6بہن بھائیوں میں سے ایک 25سالہ نوجوان جین زون وین دورستن فرار ہو کر قریبی قصبے کے شراب خانے میں چلا گیا۔ وہاں پہنچتے ہی اس نے 5بیئر پیں اور پھر شراب خانے کے مالک کو حقیقت سے آگاہ کیا جس نے فوری طور پر پولیس بلا لی اور پولیس نے فارم ہاﺅس پر چھاپہ مار کر باقی پانچ بہن بھائیوں کو بھی بازیاب کرا لیا۔

پولیس کے مطابق ملزم جوزف برنر نے ان بہن بھائیوں کو یقین دلا رکھا تھا کہ جلد قیامت آنے والی ہے اور وہ اسی بہانے انہیں گھر سے باہر نہیں جانے دیتا تھا۔ سالوں سے اس نے ان بہن بھائیوں کو بھی ایک دوسرے سے نہیں ملنے دیا۔ وہ الگ الگ کمروں میں ہی رہتے تھے اور نہیں جانتے تھے کہ ان کے باقی بہن بھائی کہاں ہیں۔ پولیس کے مطابق یہ بہن بھائی ان 9سالوں میں ذہنی و نفسیاتی طور پر اتنا شدید متاثر ہوئے ہیں کہ ان میں سے کئی بولنا بھی بھول چکے ہیں۔ جب انہیں فارم ہاﺅس سے بازیاب کرایا گیا تو ان کے کپڑے پھٹے پرانے اور میلے کچیلے تھے اور ان کی طبی حالت بھی انتہائی خراب تھی۔ ملزم نے فارم ہاﺅس پر ایک خفیہ کمرہ بھی بنا رکھا تھا۔ وہ خود کبھی کبھار باہر چلا جاتا تاہم ان بہن بھائیوں میں سے کسی کو کبھی اس نے کمرے سے بھی باہر نہیں نکلنے دیا۔ملزم کو جلد عدالت میں پیش کیا جائے گا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس