پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کی صوبہ بھر میں اتائیوں کے کارروائیاں ، کتنے اڈے سیل کردیئے ؟جانئے 

 پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کی صوبہ بھر میں اتائیوں کے کارروائیاں ، کتنے اڈے سیل ...
 پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کی صوبہ بھر میں اتائیوں کے کارروائیاں ، کتنے اڈے سیل کردیئے ؟جانئے 

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن نے اتائیوں کے خلاف جاری کارروائی کے دوران گذشتہ تین ہفتوں کے دوران 28شہروں میں 223 اتائیت کے اڈے سیل کر دیے ہیں۔

تفصیلات کےمطابق کمیشن کی ٹیموں نےدو ہزار ایک سو 16علاج گاہوں پر چھاپے مارکر وہ223 کلینک بندکردیے ہیں جہاں پر ’اتائی‘ کام کر رہے تھے جبکہ پانچ سو 89اتائیوں نے اپنے کاروبار ترک بھی کر دیے ہیں۔ علاوہ ازیں ایک ہزار ایک سو  25 ایسی علاج گاہوں کی نگرانی بھی شروع کر دی گئی ہے جہاں پر چھاپوں کے وقت مستند معالجین موجود تھے ۔

ضلع رحیم یار خان میں کمیشن نے سیل کیے گئے  کلینکس کوغیر قانونی طور پر دوبارہ کھولنے کے سبب چار اتائیوں کے خلاف مقدمات بھی درج کروا دیے ہیں۔ جن شہروں میں بڑی کارروائیاں کی گئیں ان میں راولپنڈی اور فیصل آباد ہر ایک میں 19،19پاکپتن 15،لاہور14،ملتان اور خوشاب میں13،13چکوال اور ننکانہ صاحب میں 11 ،11جبکہ قصور میں 10 اتائیوں کے اڈے سربمہر کیے گئے۔

لاہور میں بند کیے گئے اڈوں میں بڑی تعداد ان اتائیوں کی تھی جو جنرل فزیشنز بن کر لوگوں کی زندگیوں سے کھیل رہے تھے ۔ان میں اے اے خان ڈینٹل سرجن،فیض ہیلتھ سنٹر،ممتاز ہومیوپیتھک کلینک،مقصود کلینک،رزاق کلینک،اکبر کلینک،ماشاءاللہ کلینک،دلشاد کلینک،سرورکلینک،عارف کلینک ،افضل کلینک،شیخ کلینک،طاہر کلینک،خالد کلینک اور شہزاد کلینک شامل ہیں۔ پی ایچ سی کے ترجمان نے مزید کہا ہے کہ کمیشن نے اب تک ایک لاکھ آٹھ ہزار سے زائد علاج گاہوں پر چھاپے مارکر 34ہزار تین سو 45اتائیوں کے کاروبار سیل کیے ہیں جبکہ 25ہزار چار سو 22اتائیوں نے اپنے غیرقانونی کاروبار بند بھی کر دیے ہیں۔ 

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -