کارکنوں کی نظر بندیاں، دائر درخواستوں پر معاملہ ہوم ڈیپارٹمنٹ کو بجھوا دیا گیا

کارکنوں کی نظر بندیاں، دائر درخواستوں پر معاملہ ہوم ڈیپارٹمنٹ کو بجھوا دیا ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور (نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے عوامی تحریک اور تحریک انصاف کے 160 سے زائد کارکنوں کی نظر بندیوں کے خلاف دائر دوالگ الگ درخواستوں پرکارروائی کرتے ہوئے معاملہ ہوم ڈیپارٹمنٹ کو بجھوا دیا ہے اور ہوم سیکرٹری پنجاب کو اس سلسلے میں دائر ہونے والی عرضداشتوں کا دو روز میں فیصلہ کرنے کا حکم دیا ہے ۔لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس محمد قاسم خان نے عوامی تحریک اور تحریک انصاف کے 100 سے زائد کارکنوں کی نظر بندیوں کے خلاف درخواستوں پر سماعت کی،د رخواست گزاروں کے وکلاءنے موقف اختیار کیا کہ آئین کے تحت ہر شہری کو احتجاج کا حق ہے مگر حکومت نے اسلام آباد دھرنوں میں شرکت روکنے کیلئے سو سے زائد کارکنوں کو نظر بند کر دیا ہے ، انہوں نے استدعا کی کہ عدالت نظربند کارکنوں کو رہا کرنے کا حکم دے، سرکاری وکیل نے عدالت کو بتایا کہ ملک میں امن و امان کے قیام کیلئے حکومت کو کسی بھی شخص کو نظر بند کر نے کا اختیار حاصل ہے ۔ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل نیئر عباس رضوی نے مزید موقف اختیار کیا کہ عدالت نظر بند کارکنوںکی رہائی کا براہ راست حکم جاری نہیں کرسکتی ۔درخواست گزاروں کو نظر بند کارکنوں کی رہائی کے لئے ہوم سیکرٹری کو عرضداشت پیش کرنی چاہیے ۔
نظر بندیاں

مزید :

صفحہ آخر -