پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس آج دوبارہ شروع ہو گا، آئین کی بقاءکیلئے قرار داد پیش ہو نیکاامکان

پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس آج دوبارہ شروع ہو گا، آئین کی بقاءکیلئے قرار داد ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد (آئی این پی) پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس سیلاب کی وجہ سے 7روزہ وقفہ کے بعد (آج) بدھ کوپارلیمنٹ ہاﺅس میں ہو گا، اجلاس میں ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال پر بحث جاری رہے گی، جمہوریت کے تسلسل ، آئین کی بقاءاور پارلیمنٹ کی مضبوطی کے لئے قرار داد پیش کئے جانے کا امکان ہے، آئین و جمہوریت کو لاحق خطرات سے نمٹنے کیلئے بلایا جانے والا پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس کسی ٹھوس نتیجے پر نہ پہنچ سکا ،اب تک قومی خزانے سے اس7روزہ اجلاس پر 14 کروڑ روپے خرچ ہوچکے ہیں،پارلیمنٹ اور جمہوریت کو خطرات کا ڈرم پیٹنے کے باوجود مشترکہ اجلاس میں آنے والے ارکان کی اوسطاً حاضری20سے 30فیصد رہی،75 فیصد کے لگ بھگ اراکین پارلیمنٹ نے اس اجلاس سے اپنی عدم دلچسپی کا اظہار‘وفاقی وزیر برائے پانی و بجلی خواجہ محمد آصف ایوان کو سیلاب کی تباہ کاریوں سے ہونے والے جانی و مالی نقصان سے تفصیلی آگاہ کریں گے۔ تفصیلات کے مطابق عوامی تحریک اور تحریک انصاف کے لانگ مارچ اور بعد ازاں دھرنوں کی وجہ سے سیاسی کشیدہ صورتحال کی وجہ سے بلایا جانے والا دونوں ایوانوں کا مشترکہ اجلاس سات روز کے وقفہ کے بعد بدھ 17ستمبر کی شام کو دوبارہ اسپیکر سردار ایاز صادق کی زیر صدارت شروع ہو گا۔ اجلاس گزشتہ ہفتے جمعہ کو سیلاب کی وجہ سے 7روز کے لئے ملتوی ہوا تھا۔اب تک قومی خزانے سے اس7روزہ اجلاس پر 14 کروڑ روپے خرچ ہوچکے ہیں،پارلیمنٹ اور جمہوریت کو خطرات کا ڈرم پیٹنے کے باوجود مشترکہ اجلاس میں آنے والے ارکان کی اوسطاً حاضری20سے 30فیصد رہی،75 فیصد کے لگ بھگ اراکین پارلیمنٹ نے اس اجلاس سے اپنی عدم دلچسپی کا اظہار کیا۔ ایک دو روز کے علاوہ ایوان کا کورم پورا کرنا سپیکر سردار ایاز صادق اور وزیر مملکت برائے پارلیمانی امور شیخ آفتاب کیلئے چیلنج بنا رہا‘ دو ہفتوں سے جاری مشترکہ اجلاس میں صرف وزیراعظم کے مستعفی نہ ہونے اور خواندگی پر قرارداد کے علاوہ کوئی قانون سازی نہ کی جاسکی‘ تمام اراکین پارلیمنٹ تعمیری کام کرنے کی بجائے اپنی تقاریر میں عمران خان اور طاہرالقادری پر مسلسل تنقید کرکے اپنے دل کی بھڑاس نکالتے رہے

مزید :

صفحہ اول -