قصور میں زینب قتل کیس کے بعد ایک اور دردناک سانحہ ، 3مغوی بچوں کی لاشیں بر آمد

قصور میں زینب قتل کیس کے بعد ایک اور دردناک سانحہ ، 3مغوی بچوں کی لاشیں بر آمد
قصور میں زینب قتل کیس کے بعد ایک اور دردناک سانحہ ، 3مغوی بچوں کی لاشیں بر آمد

  


قصور (ڈیلی پاکستان آن لائن)قصور میں زینب قتل کیس کے بعد ایک اوردردناک سانحہ کا انکشاف، اغواءکئے گئے تین بچوں کو سفاکی سے قتل کرکے لاشیں گڑھے میں دبادی گئیں ، ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نے ملزمان کی جلد گرفتاری کی یقین دہانی کروادی ۔

جیونیوز کے مطابق قصور کے علاقہ چونیاں کے مختلف علاقوں سے اغواءکئے جانیوالوں تین بچوں کی لاشیں بر آمد ہوئی ہیں جبکہ ایک بچہ تاحال لاپتہ ہے ۔ایک روز قبل اغواہونیوالے فیضان کی لاش چونیاں بائی پاس سے قریب سے بر آمد ہوئی جس کی شناخت ہوگئی ہے جبکہ ڈھائی ماہ قبل اغوا ءکئے گئے علی اور سلمان کی لاشیں بھی اسی جگہ سے بر آمد ہوئی ہیں جن کی شناخت نہیں ہوسکی ۔ یکم جون کو اغواءہونیوالا 12سالہ عمران تاحال لاپتہ ہے ۔

ڈی پی او قصور عبد الغفار قیصرانی کا کہناہے کہ بچوں کو اغوا ءکے بعد قتل کرکے گڑھوں میں دبایا گیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ ملزمان کوجلد گرفتار کرلیا جائے گا ۔ پولیس کے مطابق گڑھوں سے ملنے والی ہڈیوں کا ڈی این اے کروایا جائے گا تاکہ لاشوں کی شناخت ہوسکے ۔

مزید : قومی /جرم و انصاف /Breaking News


loading...