مریم نواز پیشی پر ہنگامہ آرائی کیس‘پولیس کو واقعہ کی فوٹیج محفوظ کرنے کا حکم 

مریم نواز پیشی پر ہنگامہ آرائی کیس‘پولیس کو واقعہ کی فوٹیج محفوظ کرنے کا ...

  

لاہور(نامہ نگار)انسداد دہشت گردی کی عدالت نے سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز کی نیب آفس پیشی کے موقع پر ہنگامہ آرائی کے کیس میں پولیس کو نیب آفس کے باہر واقعہ کی فوٹیج محفوظ کرنے کا حکم دے دیاہے،عدالت نے رانا ثناء اللہ کی حاضری معافی کی درخواست بھی منظور کرلی ہے،عدالت نے رانا ثناء اللہ اور کیپٹن ر صفدر کی عبوری ضمانت میں 22 ستمبر تک توسیع بھی کردی ہے،رانا ثناء اللہ اور کیپٹن (ر)محادصفدر کی درخواست ضمانتوں پر انسداد دہشت گری عدالت نے سماعت کی،گزشتہ روز کیپٹن (ر)محمدصفدر انسداد دہشت گری کی عدالت میں پیش  ہوئے،ان کے وکیل سید فرہاد علی شاہ نے کہا کہ کیپٹن (ر)محمدصفدر نے 23 ستمبر کو اسلام آباد ہائیکورٹ پیش ہونا ہے،عدالت سے استدعاہے کہ اس دن کے علاوہ کوئی تاریخ مقرر کر دیں،عدالت یہ استدعا بھی ہے کہ سیف سٹی کیمروں کی فوٹیج کومحفوظ بنانے کا حکم بھی دیائے،سرکاری وکیل نے کہا کہپولیس پہلے ہی یہ سارے کام کر رہی ہے اور شواہد اکٹھے کر رہی ہے، عدالت نے پولیس کو نیب آفس کے باہر سیف سٹی کیمروں کی فوٹیج محفوظ بنانے کا حکم دیتے ہوئے سماعت آئندہ تاریخ پیشی تک ملتوی کردی۔

مزید :

علاقائی -