”حکومت کو تسلیم نہ کرنے کا وہ لوگ کہہ رہے ہیں جو اپنے آبائی حلقے سے بھی ہار چکے“ شہباز گل کی مولانا فضل الرحما ن پر تنقید 

”حکومت کو تسلیم نہ کرنے کا وہ لوگ کہہ رہے ہیں جو اپنے آبائی حلقے سے بھی ہار ...
”حکومت کو تسلیم نہ کرنے کا وہ لوگ کہہ رہے ہیں جو اپنے آبائی حلقے سے بھی ہار چکے“ شہباز گل کی مولانا فضل الرحما ن پر تنقید 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی شہباز گل نے مولانا فضل الرحمان پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت تسلیم نہ کرنے کا وہ کہہ رہے جو اپنے آبائی حلقے سے بھی ہار چکے۔ مولانا فضل الرحمان کے بیان پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مولانا نے اپنی پوری سیاست اور حمایت کی قیمت ایک سیٹ رکھی ہے۔مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر شہباز گل نے کہا کہ عدلیہ کی آزادی اور خود مختاری کے بھاشن دینے کے بعد آیئنے میں اپنا چہرہ ضرور دیکھیں آپ وہی ہیں جنہوں نے باقاعدہ سپریم کورٹ پر حملہ کیا جو جج ملک قیوم کو فون کر کے وڈے پائین کے پیغام دیتے تھے کہ ”©فلاں نوں چھڈ دیو فلاں نو ڈک دیو“اورسیف الرحمان فون پر ججوں کوبتاتے تھے کس کو کتنی سزا دینی ہے۔

واضح رہے کہ مولانا فضل الرحمان نے ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ موجودہ حکومت دھاندلی کی پیداوار ہے اس کو ہم تسلیم نہیں کرتے۔ انہوں نے کہا تھا کہ ہمیں سولی پر چڑھا دیں یا بندوق کی نالی کے سامنے کھڑا کر دیں ہم اس حکومت کو کسی صورت بھی تسلیم نہیں کر سکتے۔

مزید :

قومی -