امریکہ نے دہشت گردی کے خلاف دوہری پالیسی اپنائی ہے: آیت اللہ علی خامنہ ای

امریکہ نے دہشت گردی کے خلاف دوہری پالیسی اپنائی ہے: آیت اللہ علی خامنہ ای
امریکہ نے دہشت گردی کے خلاف دوہری پالیسی اپنائی ہے: آیت اللہ علی خامنہ ای

  

تہران(مانیٹرنگ ڈیسک)ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای نے امریکی ریاست میساچوسیٹس کے دارالحکومت بوسٹن میں میراتھن ریس میں ہوئے دھماکوں کی مذمت کرتے ہوئے امریکہ کو دہشت گردی کے خلاف دہری پالیسی پر تنقید کا نشانہ بھی بنایا۔انہوںنے کہا کہ ایران دنیا کے کسی بھی خطے میں ہونے والی دہشت گردی کے خلاف ہے اور اس کی سختی سے مذمت کرتا ہے، اس کے برعکس امریکہ جو انسانی حقوق کا علمبردار بنتا ہے نے ہمیشہ سے دہشت گردی کے خلاف دہری پالیسی اختیار کر رکھی ہے۔انہوں نے کہا کہ امریکہ پاکستان، افغانستان، عراق اور شام میں تو دہشت گردی کی کارروائیوں پر خاموش رہتا ہے اور جب اپنے ملک میں کچھ ہوتا ہے تو اس پر واویلہ مچا دیتا ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ روز ایران کے وزارت خارجہ کے ترجمان نے بوسٹن میراتھن میں ہوئے دھماکوں کو امریکا کے لئے دکھ کی گھڑی قرار دیا تھا، پیر کو بوسٹن میں ہوئے دھماکوں میں 3 افراد ہلاک اور 170 سے زائد زخمی ہوگئے تھے۔

مزید :

بین الاقوامی -