ٹیوب ویل 14جنریٹر پر چلیں گے ، لاہور یوں کو 24گھنٹے پانی ملے گا

ٹیوب ویل 14جنریٹر پر چلیں گے ، لاہور یوں کو 24گھنٹے پانی ملے گا

  

لاہور(جاوید اقبال)واسا نے گرمیوں میں صارفین کو 24 گھنٹے پانی کی سپلائی جاری رکھنے اور مون سون کے دوران لاہور کو پانی میں ڈوبنے سے بچانے کے لئے گرمیوں میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ کے متبادل ٹیوب ویلز پر جنریٹرز12سے 14گھنٹے چلائے جائیں گے جبکہ 100 مزید ٹیوب ویلوں پر گرمیوں میں جنریٹرز لگائے جائیں گے جن میں سے 72جنریٹرز کرائے پر حاصل کئے جائیں گے ۔اسی طرح پانچ جون تک تمام برساتی اور سیوریج کے نالوں کی صفائی کو یقینی بنایا جائے گا دس جون سے پندرہ ستمبر تک فیلڈ اور آپریشنل سٹاف کی چھٹیوں پر پابندی عائد کر دی جائے گی۔یہ فیصلے ایم ڈی واسا عبدالقدیر خان کی زیر صدارت ہونے والے اعلی سطحی اجلاس میں کئے گئے ۔اجلاس میں وائس چیئرمین چودھری شہباز احمد‘ڈی ایم ڈی آپریشن اصغر بھلی سمیت تمام آپریشنل اور انجینئرنگ کے ڈائریکٹروں نے بھی شرکت کی ۔اس موقع پر ایم ڈی واسا عبدالقدیر خان نے کہا کہ گرمیوں اور خصوصاً رمضان المبارک کے دوران شہریوں کو چوبیس گھنٹے پانی فراہم کیا جائے گا۔ اگر کسی سب ڈویژن نے متعلقہ اوقات کار کے مطابق ٹیوب ویل نہیں چلوائے تو پھر اس ایس ڈی او کو معطل کیا جائے ۔ڈیزل کی ٹیوب ویلوں پر کمی نہیں آنے دی جائیگی اور پانچ جون سے قبل تمام برساتی نالوں کی صفائی کو یقینی بنایا جائے ۔ایم ڈی نے عبدالقدیر خان نے ’’پاکستان‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس دفعہ رمضان اور گرمیوں کے دوران پانی کی سپلائی کے اوقات کار میں اضافہ کیا جارہا ہے اور مون سون کے دوران محکمہ موسمیات کی پشین گوئی ہے کہ معمول سے زیادہ بارشیں ہوں گی لیکن ہم نے طے کر لیا ہے جس پر سختی سے عمل درآمد کروائیں گے مون سون کے دوران فیلڈ اور آپریشنل سٹاف کی چھٹیوں پر پابندی عائد کردی جائے گی ایسے انتظامات کئے گئے ہیں کہ بارشی پانی اپنے مقررہ وقت پر نکل جائے گا ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -