سی سی پی ، اوپر اسیکیوٹرز مل کر چالان داخل کرانیکا میکنزم بنائیں : ہائیکورٹ کا حکم

سی سی پی ، اوپر اسیکیوٹرز مل کر چالان داخل کرانیکا میکنزم بنائیں : ہائیکورٹ ...

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ کے دورکنی خصوصی بنچ نے سی سی پی اوکو پراسیکیوٹرز کے ساتھ مل کر چالان بروقت عدالتوں میں داخل کرانے کا میکنزم تیار کرکے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا ہے ۔جسٹس مس عالیہ نیلم کی سربراہی میں دورکنی خصوصی بنچ نے منشیات کے ملزم عبدالوہاب کی درخواست ضمانت پر سماعت شروع کی تووکیل نے موقف اختیارکیاکہ تھانہ گرین ٹاون نے ملزم کے خلاف 1800 گرام چرس رکھنے کا بے بنیاد مقدمہ درج کیا ،وہ بے قصور ہے اوردرخواست ضمانت منظور کی جائے،عدالتی حکم پر سی سی پی او امین وینس پیش ہوئے جب کہ ان کے ہمراہ ایس پی لیگل رانا محمد لطیف بھی تھے، عدالت نے ملزم کے مقدمہ کا چالان بروقت ٹرائل کورٹ میں داخل نہ کرانے پر برہمی کا اظہار کیاجس پر سی سی پی او نے عدالت کو بتایا کہ مقدمے کا چالان بروقت داخل نہ کرانے والے تفتیشی افسر راشد علی کو معطل کردیا گیاہے اوراسے شوکاز نوٹس جاری کرتے ہوئے انکوائری شروع کردی گئی ہے۔عدالت نے کیس کی سماعت ملتوی کرتے ہوئے سی سی پی او امین وینس کو پراسیکیوٹرز کے ساتھ مل کر عدالتوں میں بروقت چالان داخل کرانے کا میکنزم تیار کرکے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیاہے۔

مزید :

علاقائی -