گھریلو جھگڑوں سے دلبرداشتہ خواتین سمیت 4 افراد کی خود کشی

گھریلو جھگڑوں سے دلبرداشتہ خواتین سمیت 4 افراد کی خود کشی

  

ملتان ‘وہاڑی ‘ کوٹ سلطان ( کرائم رپورٹر ‘ نمائندگان ) چار افراد نے گھریلو جھگڑوں سے تنگ آکر زندگی کا خاتمہ کرلیا ۔ ملتان سے کرائم رپورٹر کے مطابق مظفر گڑھ کی رہائشی 20 سالہ شمیم مائی نے 3 روز قبل گھریلو جھگڑے پر دلبرداشتہ ہو کے کالا پتھر پی لیا تھا۔متاثرہ کو نشتر ہسپتال منتقل کیا گیہا جوگزشتہ روز زندگی کی بازی ہار گئی۔جبکہ خانیوال کے رہائشی 35 سالہ علی نے گھریلو حالات سے دلبرداشتہ (بقیہ نمبر53صفحہ7پر )

ہو کے گلے میں پھندہ ڈال کے خود کشی کی کوشش کی۔جسے نشتر ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔علاوہ ازیں ملتان کے رہائشی 45 سالہ اشفاق نے گندم میں رکھنے والی گولیاں کھا کے خود کشی کی کوشش کی۔ملتان کی رہائشی 18 سالہ شبانہ نے بلیچنگ پی لیا۔مظفر گڑھ کی رہائشی 35 سالہ غلام جنت نے کالا پتھر پی لیا۔تمام متاثرین کو نشتر ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ وہاڑی سے بیورو رپورٹ ‘ نامہ نگار کے مطابق نواحی گاؤں35ڈبلیوبی میں 32سالہ شادی شدہ نو جوان خالد نے گھریلو حالات سے تنگ آکر مبینہ طور پر گلے میں پھندا ڈال کر خود کشی کرلی ، جس کی اطلا ع ملتے ہی پولیس تھانہ صدر نے ضروری کا رروائی کے بعد نعش ورثا کے حوالے کردی ، جبکہ دوسراواقعہ نواحی گاؤں 20ڈبلیوبی میں پیش آیا جہاں پر اللہ یار بھٹی نا می شخص کی شادی شدہ لڑکی ذکیہ بی بی نے مبینہ طورپر اپنی بھا بھی سے جھگڑا کر کے تیز اب پی لیا حالت نا زک ہونے پر ڈی ایچ کیو ہسپتال وہاڑی داخل کرا دیا گیا مگر چند گھنٹوں بعد جا ں بحق ہو گئی متوفیہ ایک بچی کی ما ں تھی۔ کوٹ سلطان سے نامہ نگار کے مطابق کوٹ ادو کے رہائشی محنت کش پنوں سیال کا 20سالہ بیٹا خاور عباس کوٹ سلطان کے محلہ حسنین آباد میں اپنے ماموں محمد رمضان ولد محمد حسین سیال کے گھر ملنے آیا ہوا تھا جہاں گزشتہ شب اس نے زہر کھا کر خود کشی کر لی ،جسے تحصیل ہسپتال لایا گیا مگر وہ جانبر نہ ہو سکا ،پولیس نے نعش پوسٹ مارٹم کے بعد ورثاء کے سپرد کر دی ،پولیس کے مطابق نوجوان نے گھریلو ناچاقی پر زہریلی گولیاں کھا کر خود کشی کی ہے ،جبکہ متوفی کے والد پنوں سیال کا کہنا ہے کہ اس کے بیٹے کو زہر دیکر مارا گیا ہے پولیس نے والد کی درخواست پر رپٹ درج کر کے تحقیقات شروع کر دی ہیں ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -