چارسدہ میں سکول ٹیچر کی چوتھی جماعت کے طالبعلم پر بے پناہ تشدد

چارسدہ میں سکول ٹیچر کی چوتھی جماعت کے طالبعلم پر بے پناہ تشدد

  

چارسدہ (بیورو رپورٹ) چارسدہ میں سکول ٹیچر قصائی بن گیا ۔ سبق یاد نہ کرنے کے پاداش میں چوتھے جماعت کے طالبعلم کے کپڑے اتار کر الٹا لٹکایا اور حیوانوں کی تشدد کا نشانہ بنایا ۔ غیر انسانی اور غیر فطری تشدد سے معصوم طالب علم کی ذہنی خالت غیر جبکہ پورا جسم سن ہو گیا ۔ متاثرہ طالبعلم عنایت اللہ کے چچا نے سکول ٹیچر شاہ فیصل کے خلاف سٹی تھانہ چارسدہ میں ایف آئی آر درج کی۔ متاثرہ طالبعلم کو علاج معالجہ کیلئے چارسدہ ہسپتال منتقل کیا گیا۔سپارک سی آر سی اور چائلڈ پرو ٹکیشن یونٹ کی مداخلت پر سکول ٹیچر کے خلاف چائلڈ پرو ٹیکشن ایکٹ کے تحت مقدمات بھی درج کئے گئے۔سکول ٹیچر فرار ۔ ڈی ای او چارسدہ نے سکول ٹیچر اور ہیڈ ماسٹرکو معطل کردیا ۔ تفصیلات کے مطابق گورنمنٹ پرائمری سکول قاضی خیل چارسدہ میں سکول ٹیچر شاہ فیصل نے چوتھے جماعت کے طالب علم عنایت اللہ کو سبق یاد نہ کرنے کے پاداش میں بد ترین تشدد کا نشانہ بنا کر آدھ موا کر لیا ۔ معصوم طالب علم عنایت اللہ نے اپنے ماموں جہانزیب کے ہمراہ میڈیا کو تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ سکول ٹیچر شاہ فیصل نے تشدد کے دوران ان کے کپڑے اتار کرہوا میں اچھال دئیے اور الٹا لٹکا کر حیوانوں کی طرف مارا پیٹا ۔انہوں نے مزید کہا کہ مذکورہ سکول ٹیچر نے اس سے پہلے پانی کے بالٹی میں ان کا سر بھی ڈبو یاجس سے ان کی خالت غیر ہو گئی ۔ انہوں نے کہا کہ سکول ٹیچر شاہ فیصل نے ان کے ہمراہ دو اور طالب علموں کوبھی تشد د کا نشانہ بنا یا ہے جو خوف کی وجہ سے غائب ہیں۔ پولیس نے متاثرہ طالبعلم کے ماموں جہانزیب کی رپورٹ پر سکول ٹیچر شاہ فیصل کے خلاف مقدمات درج کرکے گرفتاری کیلئے چھاپے شروع کئے ۔ دوسری طرف سپارک سی آر سی کے ڈسٹرکٹ کوآرڈنیٹر ظہور احمد ظریف خیل اور ڈسٹرکٹ چائلڈ پرو ٹیکشن آفیسر وقار احمد کی مداخلت پر ایف آئی آر میں چائلڈ پروٹیکشن اینڈ ویلفےئر ایکٹ بھی شامل کیا گیا ۔ بعد ازاں متاثرہ طالب علم کو پولیس کی معیت میں علاج معالجہ کیلئے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوآرٹر ہسپتال چارسدہ منتقل کیا گیا۔ متاثرہ طالب علم کے ماموں جہانزیب نے میڈیا کو بتایا کہ ذمہ داراور امن پسند شہری کی حیثیت سے انہوں نے قانون کا سہارا لیکر ایف آئی آر درج کی ہے اور قانون نے ان کو انصاف فراہم نہ کیا تو وہ خود قانون ہاتھ میں لینے پر مجبور ہونگے۔ دریں اثناء ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر نے سکول ٹیچر شاہ فیصل اور ہیڈ ماسٹر تسبیح اللہ کو فوری طور پر ملازمت سے معطل کرکے اعلی سطحی انکوائری کمیٹی قائم کی ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -