ٹیپو ٹرکاں والا کے بیٹے امیر بالاج ٹیپو کو 3 روزہ جسمانی ریمانڈ پر سی آئی اے کے حوالے کردیا گیا

ٹیپو ٹرکاں والا کے بیٹے امیر بالاج ٹیپو کو 3 روزہ جسمانی ریمانڈ پر سی آئی اے ...
ٹیپو ٹرکاں والا کے بیٹے امیر بالاج ٹیپو کو 3 روزہ جسمانی ریمانڈ پر سی آئی اے کے حوالے کردیا گیا

  

لاہور(نامہ نگار)ضلع کچہری کے جوڈیشل مجسٹریٹ نے قتل کے مقدمہ میں ملوث ٹیپو ٹرکاں والا کے بیٹے امیر بالاج ٹیپو کو 3 روزہ جسمانی ریمانڈ پر سی آئی اے کی تحویل میں دے دیا ہے۔

ہائی کورٹ نے گجرات پولیس کی زیرحراست اہلکار آغا رمیض کومبینہ پولیس مقابلے میں ہلاک نہ کرنے کا حکم دے دیا

جوڈیشل مجسٹریٹ آصف علی کی عدالت میں ملزم امیر بالاج ٹیپو کو بکتر بند گاڑی میں لا کر سخت سکیورٹی میں پیش کیا گیا، ڈی ایس پی سی آئی اے خالد ابوبکر نے ملزم کے خلاف درج مقدمہ کا چالان پیش کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ ملزم کے خلاف 2013ءمیں باسط منیر کو قتل کرنے کے الزامات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا جبکہ ملزم کی سیشن کورٹ اور ہائیکورٹ سے سال دو ہزار چودہ سے عبوری ضمانت کی درخواستیں بھی خارج ہو چکی ہیں اور ملزم مقدمہ میں شامل تفتیش بھی نہیں ہو رہا ،ملزم سے مقدمہ کی تفتیش کے لئے 14روزہ جسمانی ریمانڈ دیا جائے.

ملزم کے وکیل فرہاد علی شاہ نے موقف اختیار کیا کہ باسط منیر کے قتل میں ملوث مرکزی ملزم جیل میں ہے جبکہ مقدمہ میں امیر بالاج پر قتل کروانے اور مشورہ کرنے کا الزام ہے، انہوں نے مزید کہا کہ پولیس نے ملزم کو پہلے ہی مشکل سے ضلع کچہری میں پیش کیا ہے، ملزم کی جان کو شدید خطرہ ہے اور پولیس کوتوالی میں ملزم کی حفاظت نہیں کر سکتی لہٰذا ملزم امیر بالاج کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیجا جائے، عدالت نے فریقین کے دلائل سننے اور مقدمہ کے ریکارڈ کا تفصیلی جائزہ لینے کے بعد قتل کے مقدمہ میںملوث ٹیپو ٹرکاں والا کے بیٹے امیر بالاج ٹیپو کو3 روزہ جسمانی ریمانڈ پر سی آئی اے کی تحویل میں دے دیا ، ملزم کی ضلع کچہری میں پیشی کے وقت سکیورٹی بڑھا دی گئی تھی جبکہ ملزم کی پیشی کے وقت پچاس پولیس اہلکار جبکہ ملزم کے بھی پچاس کے قریب پرائیویٹ گارڈز کی سکیورٹی حصار میں ملزم کو کمرہ عدالت تک لیجایا گیا۔

مزید :

لاہور -