جمشید دستی کا قومی حلقہ 159 جلالپور سے الیکشن لڑنے کا اعلان

جمشید دستی کا قومی حلقہ 159 جلالپور سے الیکشن لڑنے کا اعلان

شجاع آباد’جلالپور پیروالا ‘ مظفر گڑھ (نامہ نگار) عوامی راج پارٹی کے سربراہ جمشید دستی نے جلالپور پیروالا کے قومی حلقہ این اے 159 سے الیکشن لڑنے اور شجاع آباد کے حلقہ این 158 سے اﷲ نواز وینس کی حمایت کا اعلان کردیا۔ نیشنل پریس کلب شجاع آباد آمد پر صحافیوں سے گفتگو میں کہا کہ جب(بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

تک کرپشن ثابت ہونے پر سزائے موت کا قانون لاگو نہیں ہوتا اس وقت تک پاکستان کی سیاست کرپشن سے پاک نہیں ہو سکتی۔ آج بھی اسمبلیوں میں نوے فی صد کرپٹ اور لٹیرے سیاستدان بیٹھے ہیں۔ سپریم کورٹ آف پاکستان نے بڑے بڑے مگر مچھوں کے خلاف جو فیصلے دیئے ہیں ماضی میں انکی کوئی مثال نہیں ملتی۔ احتساب صرف چند سیاستدانوں تک محدود رکھنے کی بجائے تمام لٹیروں کے خلاف ہونا چاہیے۔ چیف جسٹس آف پاکستان نے اپنے حصے کا کردار ادا کردیا ہے اب عوام کو اپنے حصے کا کردار ادا کرنا ہوگا۔ انہوں نے مزید کہا کہ الیکشن وقت پر ہوتے نظر آرہے ہیں۔ آنیوالے الیکشن میں عوامی راج پارٹی ملک کے مختلف انتخابی حلقوں سے اپنے امیدوار سامنے لائے گی۔ عوامی راج پارٹی کا مقابلہ اس ملک کے تما لٹیروں سے ہے۔ ملک ڈشمن عناصر کو انکے منطقی انجام تک پہنچانا ہمار امنشور ہے۔ جنوبی پنجاب کی محرومیوں کے خاتمے کیلئے اس خطے کے عوام عوامی راج پارٹی کے امیدواروں کو کامیاب کرائیں۔ تاہم اس الیکشن میں کسی بڑی سیاسی پارٹی کیساتھ الحاق کوئی ارادہ نہیں ہے۔ شجاع آباد حلقہ این اے 158 سے پاکستان سرائیکی پارٹی کے صدر اللہ نواز وینس کو بھر پور حمائت کریں گے جبکہ جلال پور کے جاگیرداروں کا مقابلہ میں خود کروں گا۔ منگل کے روز جلال پور شہر کے مرکزی چوک میں عوامی اجتماع سے خطاب اور بعد ازاں پریس کانفرنس کرتے ہوئے جمشید دستی نے حکومتی و اپوزیشن گروپوں کے ساتھ ساتھ مقامی سیاستدانوں پر شدید تنقیدکی۔ جمشید دستی کا کہنا تھا کہ سرائیکی خطے کے جاگیردار اور لوٹے سیاستدان جنوبی پنجاب صوبے کا نام استعمال کرتے ہوئے اب جس سیاسی جماعت میں بھی شامل ہو جائیں یہ عوام کو دھوکہ ہی دیں گے۔انہوں نے پریس کانفرنس میں شریک سرائیکی ملت پارٹی کے سربراہ اصغر خان ایڈووکیٹ، جنرل سیکرٹری قاضی محمد ارشد اور ملک اکبر لانگ کو صوبائی نشستوں پر عوام سے مخلص اور غریب لوگوں کو آگے لے کر آنے کی تجویز بھی دی۔ جمشید دستی نے پیپلز پارٹی کی قیادت کو بھی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ یہ پارٹی جس بلاول زرداری کو آگے لا رہی ہے ابھی تک اس کی جنس کا ہی علم نہیں ہو پارہا۔ قبل ازیں جمشید دستی کی جلال پور آمد پر سائیکی ملت پارٹی کے کارکنوں نے ان کا پرتپاک استقبال کیا ۔ علاوہ ازیں جمشید احمد دستی نے سوئی ناردرن گیس ایمپلائز یونین سی بی اے مظفر گڑھ کے وفد سے ملاقات کرتے ہوئے کہا کہ سوئی ناردرن گیس ایک منافع بخش ادارہ ہے اوراس کی نجکاری کرنا نا انصافی ہے ایسے قومی ادارے کی یونیٹی کی علامت ہیں اور ذمہ داروں پر مزدوروں کا خون پسینہ لگا ہوا ہے ۔اس قومی اداروں کو مزدوروں نے دنیا کے دسویں نمبر پر ترقی یافتہ ادارہ بنایا ہے ۔اگر سوئی گیس ناردرن کی نجکاری کی گئی تو جہاں پر غریب ملازمین کو نقصان پہنچے گا وہاں صارفین کو بھی گیس مہنگی ملے گی ۔وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے اپنے سابقہ ادوار میں قومی ادارے پی آئی اے کو تباہی کے دہانے پر پہنچایا اور اپنی ایئر لائن کمپنی کو فائدہ پہنچایا سابقہ روایت کو شاہد خاقان عباسی دہراتے ہوئے سوئی ناردرن گیس کو بھی خسارے کا شکار کر کے اپنی پرائیویٹ کمپنی کو نجکاری کے ذریعے نوازنا چاہتے ہیں ۔انہوں نے کہا موجود حکومت کے دو ماہ رہ گئے ہیں اور اب ان کے پاس کمپنیوں کو نجکاری کرنے کا مینڈیٹ نہیں ہے اس غیر آئینی اور غیر قانونی اقدام کیخلاف آنیوالے قومی اسمبلی کے اجلاس میں بھر پور احتجاج کروں گا ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر