نجی تعلیمی اداروں کو 4ماہ کی یکمشت فیسیں لینے سے نہ روکا جا سکا ‘ والدین پریشان

نجی تعلیمی اداروں کو 4ماہ کی یکمشت فیسیں لینے سے نہ روکا جا سکا ‘ والدین ...

ملتان(جنرل رپورٹر)پرائیویٹ سکولوں کو موسم گرما کی 4،4ماہ کی یکمشت(بقیہ نمبر35صفحہ12پر )

فیسیں لینے سے روکا نہیں جا سکا ہے جسکی وجہ سے والدین شدید پریشان ہیں جبکہ محکمہ سکولز ایجوکیشن نے چپ سادھ رکھی ہے اور پرائیویٹ سکولز کی طرفسے ظالمانہ کاروائیاں جاری ہیں۔بیشتر پرائیویٹ سکولز بچوں سے مارچ سے مارچ کے ساتھ جون،اپریل کے ساتھ جولائی کی فیسیں لے رہے ہیں اس کے بعد وہ بچوں سے مئی کے ساتھ اگست کی دو ،دو ماہ کی فیسیں وصول کیں گے جو والدین پر اضافی بوجھ ہے ۔محکمہ سکولز کو والدین کی طرفسے ایڈوانس فیسوں کی وصولی کی تحریری شکایا ت بھی ملی ہیں مگر محکمہ کے افسران نے ابھی تک کوئی ایکشن نہیں لیا ہے ۔ایڈوانس فیسوں کی وصولی کا سلسلہ ہر سال کی گرما کی چھٹیوں سے قبل ہی شروع ہو جاتا ہے اور محکمہ تعلیم پرائیویٹ سکولوں کو ایسا نہ کرنے کی ہدائیت توکرتا ہے مگر عملی طور پر یا پولیس فورس کے ذریعے کوئی اقدام نہیں کیا جاتا ہے جس کی وجہ سے مجبور والدین ہتھیار ڈالنے کو ہی عافیت سمجھتے ہیں اور یہ عمل حکومت اور محکمہ تعلیم کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر