میر شکیل بیمار ہیں تو انہیں سٹریچر پر عدالت لایا جائے ،چیف جسٹس کا حکم، نجی ٹی وی مالک پیر کو دوبارہ طلب

میر شکیل بیمار ہیں تو انہیں سٹریچر پر عدالت لایا جائے ،چیف جسٹس کا حکم، نجی ...
میر شکیل بیمار ہیں تو انہیں سٹریچر پر عدالت لایا جائے ،چیف جسٹس کا حکم، نجی ٹی وی مالک پیر کو دوبارہ طلب

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)جیواورجنگ کے ملازمین کوتنخواہوں کی عدم ادائیگی سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران نجی ٹی وی کے مالک میر شکیل عدالت میں پیش نہ ہوئے ۔

اس پر چیف جسٹس آف پاکستان نے سخت برہمی کا اظہارکیا اور ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ میر شکیل بیمار ہیں تو انہیں سٹریچر پر عدالت لایا جائے ،عدالت نے نجی ٹی وی مالک کو پیرکو دوبارہ طلب کر لیا۔

چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ یہ افسوسناک ہے میرشکیل پیش نہیں ہوئے،ان کا کہناتھا کہ میر شکیل طلبی کے باوجود عدالت میں پیش نہیں ہوئے۔

چیف جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ میر شکیل کا تکبر اتنا ہے وہ عدالت میں پیش نہیں ہوتے،میر شکیل نے عدالت کے باہر کہا عدالتی آرڈر بے ہودہ ہے۔

چیف جسٹس نے کہا کہ تنقید کا بھی کوئی طریقہ ہوتا ہے،عدلتوں کو بے ہودہ نہیں کہا جاتا۔

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ ویسے میر شکیل ہیںکہاں وہ پیش کیوں نہیں ہو رہے ؟،وکیل جیونیوز نے بتایا کہ میرشکیل کے بیٹے میر ابراہیم موجود ہیں جو سی ای او ہیں۔

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ آپ کون ہیں؟۔اس پر جیو ٹی وی کے سی ای او نے جواب دیا کہ میرانام میر ابراہیم ہے ،چیف جسٹس نے کہا کہ میں آپ کو نہیں جانتا ۔

نمائندہ جیو ٹی وی نے بتایا کہ میر شکیل بیمار ہیں،اس پر چیف جسٹس نے کہا کہ میر شکیل بیمار ہیں تو انہیں سٹریچر پر عدالت لایا جائے ،ان کی وجہ تیسری مرتبہ سماعت ملتوی کی جا رہی ہے ،

عدالت نے ریمارکس دیئے کہ میر شکیل پیش ہو کر وضاحت کریں کیوں سٹاف کو تنخواہ نہیں دی،عدالت نے میر شکیل کو پیر کو دوبارہ طلب کر لیا۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد