بد عنوانی مقدمات سے بچنے لیے سعد رفیق کن شخصیات کے پاس سفارش کیلیے گئے ؟نعیم بخاری نے بڑا دعویٰ کردیا

بد عنوانی مقدمات سے بچنے لیے سعد رفیق کن شخصیات کے پاس سفارش کیلیے گئے ؟نعیم ...
بد عنوانی مقدمات سے بچنے لیے سعد رفیق کن شخصیات کے پاس سفارش کیلیے گئے ؟نعیم بخاری نے بڑا دعویٰ کردیا

  

اسلا م آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)پی ٹی آئی کے سینئر رہنما نعیم بخاری نے دعوی کیا ہے کہ وفاقی وزیر ریلوے سعد رفیق اپنے بد عنوانی کے مقدمات سے بچنے کیلیے سفارش کے لیے 4 جرنیلوں سے ملیں ہیں ۔

نجی چینل کے پروگرام میں گفتگو کے داران نعیم بخار ی نے کہا کہ سعد رفیق بد عنوانی کے مقدمات سے بچنے کی سفارش کروانے کیلیے چار جرنیلوں سے ملے تھے،لیکن ان جرنیلوں نے سعد رفیق کو صاف جواب دیا کہ ہر چیز کا فیصلہ سپریم کورٹ نے کرنا ہے،ہم سپریم کورٹ کے فیصلوں میں مداخلت نہیں کر سکتے۔ہم آئینی طور پرسپریم کورٹ کے تابع ہیں۔

واضح رہے کہ کچھ روز قبل چیف جسٹس ثاقب نثار اور سعد رفیق کے درمیان تلخ جملوں کا تبادلہ خیال ہوا تھا جس پر چیف جسٹس نے کہا تھا کہ سعد رفیق روسٹرم پر آئیں اور لوہے کے چنے بھی ساتھ لے کر آئیں۔جس پر سعد رفیق نے کہا تھا کہ میں نے لوہے کے چنے والی بات سیاسی مخالفین کے لیے کی تھی۔اس سماعت کے بعد میڈیا پر قیاس آرائیاں ہونے لگ گئی تھیں کہ سعد رفیق سفارش کرنے کے لیے کچھ معروف شخصیات سے ملے ہیں۔

مزید : قومی