لوگوں نے احتجاج ختم جاری رکھنے کا کہا،نہیں جانتا لوگ پی ٹی آئی کے تھے یا نہیں:رابعہ والد

لوگوں نے احتجاج ختم جاری رکھنے کا کہا،نہیں جانتا لوگ پی ٹی آئی کے تھے یا ...
لوگوں نے احتجاج ختم جاری رکھنے کا کہا،نہیں جانتا لوگ پی ٹی آئی کے تھے یا نہیں:رابعہ والد

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) منگھوپیر میں زیادتی کے بعد قتل ہونے والی رابعہ کے والد بقا محمد کا کہنا ہے کہ گذشتہ روز وہ تدفین کے لیے جا رہے تھے تو علاقے والوں کے کہنے پر انصاف کے حصول کیلیے احتجاج شروع کر دیا۔

میڈیا سے گفتگو کے دوران بچی کے والد نے کہا کہ وہ نہیں جانتا کہ وہ لوگ پی ٹی آئی والے تھے یا کوئی اور تھے۔لاش کی حالت ٹھیک نہیں تھی، میں احتجاج ختم کرنا چاہتا تھا، لیکن مجھے لوگوں نے کہا احتجاج کرتے رہو گے تو انصاف ملے گا۔والد کے مطابق گرفتار افراد میں بچی کے ماموں رحیم بخش بھی ہیں اور وہ چاہتے ہیں کہ رحیم بخش کو چھوڑ دیا جائے۔

رابعہ کے والد نے مزید کہا کہ کہ دوسرے گرفتار ملزم فضل داد سے پولیس تفتیش کرے، جس نے بچی کو چیز بھی دلائی تھی۔بقا محمد کے مطابق وہ مزید لوگوں کی بھی نشاندہی کرے گاتا کہ ان سے بھی تفتیش کی جائے۔دوسری جانب بچی کی والدہ نے کہا کہ ان کی بچی کو بے دردی سے قتل کیا گیا، انہیں انصاف چاہیے۔

واضح رہے کہ 16 اپریل کو منگھوپیر میں کچرا کنڈی سے ایک 7 سالہ بچی کی لاش برآمد ہوئی تھی، جس کی شناخت رابعہ کے نام سے ہوئی۔

مزید : اہم خبریں /قومی