مسلمانوں کو رمضان میں نعت کی محافل بھی سجانی چاہئے،طارق شاہ 

مسلمانوں کو رمضان میں نعت کی محافل بھی سجانی چاہئے،طارق شاہ 

  

کراچی(پ ر)تمام مسلمانوں کو ماہ رمضان میں دیگر عبادات کے ساتھ نعت کی محافل بھی سجانی چاہئے یہ بات آل پرائیویٹ اسکولز مینجمنٹ ایسو سی ایشن سندھ کے مرکزی چیئرمین سید طارق شاہ نے اپسمااورپاکستان رینجرزکے اشتراک سے جامعہ کراچی میں ہونے والے انٹر اسکولز اینڈ مدارس نعت مقابلہ2022 منعقد ہوا جس میں کراچی بھر کے تعلیمی اداروں کے طلباء نے بڑی تعداد میں شرکت کی تقریب کے موقع پربھٹائی رینجرز کے سیکٹر کمانڈر بریگیڈیئر محمد شبیر خان، ڈین آف اسلامک اسٹیڈیز پرو فیسر زاہد علی زاہدی اور دیگر بھی موجود تھے سید طارق شاہ نے کہاکہ ہمیں اپنے بچوں کو دین کی سمجھ اور نبی  ﷺ کی سنتوں پر عمل کرنا سیکھا نا ہوگا کیونکہ دین کو سمجھنے اور اس پر عمل کرنے کے لئے اسوائے حسنہ کو سمجھنا ضروری ہے۔انہوں نے کہا کہ جو لوگ محافل نعت کا اہتمام کرتے ہیں اللہ ان کے درجات بلند کرتا ہے آج جو افداد مسلمانوں پر آرہی ہیں اس کی وجہ دین سے دوری ہے انہوں نے کہاکہ مسلمانوں کو چاہئے کہ وہ اللہ کی رسی کو مضبوطی سے تھام رکھیں اور ایسے عمل نہ کریں جس سے مسلمانوں کے درمیان فساد و مفاق پیدا ہو ہمیں بحیثیت مسلما ن خود کو برائیوں سے محفوظ رکھتے ہوئے اپنے درمیان کسی کونفاق کا پیچ بونے سے روکنا ہے تا کہ شمن اپنے ناپاک سازشوں میں کامیاب نہ ہو سکیں۔اس موقع پر مہمان خصوصی معروف مذہبی اسکالر مفتی منیب الرحمان نے کہا کہ رمضان میں عبادت کا ثواب دوگنازیادہ ہوتا ہے ہمیں چاہئے کہ ہم اس ماہ مبارک میں زیادہ سے زیادہ عبادت اور نیک کام کریں تا کہ اللہ تعالیٰ ہم سے راضی ہو جائے انہوں نے کہاکہ ہر مسلمان کو فرض نمازوں کی ادائیگی کے علاوہ نبی  ﷺ کی سنت پر عمل اور نوافل ادا کرنے کے ساتھ اللہ سے اپنے گناہوں کی معافی طلب کرنی چاہئے تا کہ گناہ گاروں کی بخشش ہو سکے۔تقریب کے اختتام پرمقابلہ نعت خوانی میں کامیاب ہونے والے طالبعلموں میں BVCپارسی ہائی اسکول کے صبیب حسین نے پہلی،مدرسہ جامعہ احسن کے ایم حمزہ قاسم نے دوسری، مدرسہ جامعہ الکوثرکے ایم فیض نے تیسری پوزیشن حاصل کی جبکہ طالبات میں بیکن عسکری Oلیول اسکول کی نعیمہ اعظم نے پہلی،داؤد پبلک اسکول کی سوہا فاطمہ نے دوسری،بریلینٹ کیئر گرامر اسکول کی طوبیٰ علی کی تیسری پوزیشن حاصل کی جبکہ دیگر طلباء میں سرٹیفکیٹس اور اسناد تقسیم کی گئیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -