غیر ملکی قرضے اتارنے کیلئے متفقہ قومی پالیسی تشکیل دینے کی ضرورت

  غیر ملکی قرضے اتارنے کیلئے متفقہ قومی پالیسی تشکیل دینے کی ضرورت

  

لاہور(این این آئی) پاکستان ٹیکس بار ایسوسی ایشن کے صدر رانا منیر حسین نے کہا ہے کہ معاشی پالیسیوں کوسیاسی عدم استحکام سے محفوظ رکھنے اور ان پر عملدرآمد کیلئے ایسی خودمختار کمیٹی یا اتھارٹی تشکیل دی جائے جس میں اسٹیک ہولڈرز، نامورمعاشی ماہرین کے ساتھ تمام سیاسی جماعتوں کی برابر نمائندگی ہو، اس طرز پر کمیٹی یا اتھارٹی کے قیام سے آنے والی حکومت کو جانے والی حکومت پر ناکام اورناقص پالیسیوں اورمعیشت کو تباہ کرنے کے الزامات لگانے کی دیرینہ روایت ختم ہو سکے گی،سب سے پہلے غیر ملکی قرضے اتاررنے کیلئے متفقہ قومی پالیسی تشکیل دینے کی ضرورت ہے کیونکہ اس کے بغیر ہماری معیشت کی سانسیں بحال نہیں ہو سکتیں۔ان خیالات کا اظہارانہوں نے ”سیاسی عدم استحکام اورمعیشت کی مشکلات“کے موضوع پر مذاکراے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پرپاکستان ٹیکس بار کے جنرل سیکرٹری قمر زلزمان چوہدری ،پاکستان، ٹیکس بار،لاہور ٹیکس بار اور آئی کیپ کے ممبران کی کثیر تعدادبھی موجود تھی۔

مزید :

کامرس -