ویٹی کن میں تقریب کے دوران پوپ فرانسس کی ٹوپی ہوا سے اڑگئی، قیام امن کیلئے کاوشوں کی تلقین

ویٹی کن میں تقریب کے دوران پوپ فرانسس کی ٹوپی ہوا سے اڑگئی، قیام امن کیلئے ...
ویٹی کن میں تقریب کے دوران پوپ فرانسس کی ٹوپی ہوا سے اڑگئی، قیام امن کیلئے کاوشوں کی تلقین
سورس: Wikimedia Commons

  

ویٹی کن سٹی(مانیٹرنگ ڈیسک) پوپ فرانسس نے یوکرین میں جاری جنگ ختم کرتے ہوئے دنیا میں قیام امن کے لیے کوششیں کرنے کی تلقین کی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق پوپ فرانسس گزشتہ روز مسیحی مذہبی تہوار ایسٹر کے موقع پر منعقدہ تقریب میں 50ہزار سے زائد حاضرین سے خطاب کر رہے تھے۔اس موقع پر ایک واقعہ یہ بھی پیش آیا کہ ہوا کے ایک تیز جھونکے سے پوپ فرانسس کے سر سے ان کی ٹوپی بھی اڑ گئی۔

پوپ فرانسس نے رواں سال کے ایسٹر کو ’جنگ کا ایسٹر‘ قرار دیتے یوکرین پر روس کے حملے کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے کہا کہ ”ہم بہت زیادہ خون اور بہت زیادہ تشدد دیکھ چکے ہیں۔اب یہ سب کچھ بند ہونا چاہیے۔ “ انہوں نے رہنماﺅں کو تلقین کی کہ وہ لوگوں کی یوکرین میں امن قائم کرنے کی درخواست پر کان دھریں۔ 

پوپ فرانسس نے یوکرین روس جنگ کے خاتمے کے مطالبے کے ساتھ مشرق وسطیٰ، افریقہ اور لاطینی امریکہ میں بھی پرتشدد صورتحال کے خاتمے کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ”یورپ میں تصادم پر ہمیں سب سے زیادہ تحفظات لاحق ہیں، کیونکہ اس سے دنیا کے دیگر بہت زیادہ علاقے متاثر ہوتے ہیں۔ خدا کے لیے ، ہمیں جنگ و جدل کا عادی نہیں ہونا چاہیے۔“

مزید :

بین الاقوامی -