بھارت کی جانب سے کشمیر کو اٹوٹ انگ کہنے سے کوئی فرق نہیں پڑتا، فضل الرحمن

بھارت کی جانب سے کشمیر کو اٹوٹ انگ کہنے سے کوئی فرق نہیں پڑتا، فضل الرحمن

  

اسلام آباد(آن لائن)پارلیمنٹ کی خصوصی کمیٹی برائے کشمیر کے چےئرمین مولانافضل الرحمن نے کہا ہے کہ پوری دنیا جانتی ہے کہ کشمیر اےک متنازعہ ریاست ہے۔ بھارت کی جانب سے اسے اٹوٹ انگ کہنے سے کوئی فرق نہیں پڑتا۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے بھارتی وزیردفاع کے بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے کیاجنہوں نے جموں کشمیر کو بھارت کااٹوٹ انگ کہا تھا۔ چےئرمین کشمیر کمیٹی نے کہا کہ بھارت اس مسئلہ کو لےکر خوداقوام متحدہ گیا جس نے جموں کشمیر کو متنازعہ علاقہ تسلیم کیا اور رائے شماری کےلئے کہا جسے بھارت نے تسلیم کیا۔ ےہ مسئلہ اب بھی اقوام متحدہ کے ایجنڈے پر ہے۔ دنیا کے ممالک بھی اسے متنازعہ علاقہ سمجھتے ہیں اور ان کے نقشوں پر ریاست کو متنازعہ علاقہ دکھایاگیا ہے۔ بھارت کے اصرار کے باوجود انہوں نے اسے بھارت کا علاقہ تسلیم نہیں کیا۔ عالمی بنک نے بھی اسکی متنازعہ حےثےت کی بناءپر مقبوضہ کشمیر میں بھارتی منصوبوں کی مدد دےنے سے انکار کردیا۔

مزید :

ایڈیشن 1 -