سندھ ہائیکورٹ نے شوگر انکوائری کمیشن اور رپورٹ کو کالعدم قرار دیدیا 

سندھ ہائیکورٹ نے شوگر انکوائری کمیشن اور رپورٹ کو کالعدم قرار دیدیا 

  

 کراچی(سٹاف رپورٹر،) سندھ ہائیکورٹ نے شوگر انکوائری کمیشن کیخلاف ملز مالکان کی درخواست منظور کرتے ہوئے شوگر انکوائری کمیشن اور انکوائری رپورٹ کو کالعدم قرار دے دیا۔سندھ ہائیکورٹ نے شوگر انکوائری کمیشن کے خلاف شوگر ملز مالکان کی درخواست پر فیصلہ سنا دیا۔ عدالت نے متعلقہ اداروں کو چینی کی قلت اور قیمتوں میں اضافے سے متعلق آزادانہ نئی تحقیقات کرنے کا حکم دے دیا اور کہا نیب، ایف آئی اے، ایف بی آر اور دیگر ادارے چینی کی قلت سے متعلق آزادانہ اور قانون کے مطابق تحقیقات کریں۔خیال رہے 20 سے زائد شوگر ملز مالکان نے شوگر انکوائری کمیشن کی تشکیل اور رپورٹ کو سندھ ہائیکورٹ میں چیلنج کیا تھا جس میں موقف اپنایا گیا کہ یہ انکوائری کمیشن غلط بنا ہے اور جو انکوائری کی گئی وہ جانبدارانہ ہے، عدالت سے استدعا ہے کہ کمیشن کو کالعدم قرار دیا جائے۔

سندھ ہائیکورٹ

مزید :

صفحہ اول -