پورے پشاور میں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ 

  پورے پشاور میں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ 

  

پشاور،شبقدر،پبی (سٹی رپورٹر،نمائندگان پاکستان)ورسک رڈ کے رہائشیوں نے بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے خلاف گزشتہ روزورسک روڈ پر احتجاجی مظا ہرہ کیا جس کی قیا دت اکبر علی کنڈی اور یگر کر رہے تھے اس دوران مظا ہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اور بینرز اُٹھا رکھے تھے جن پر واپڈا کے خلاف مختلف قسم کے نعرے درج تھے مقررین کا کہنا تھا کہ گزشتہ ایک ما ہ سے واپڈا کی جا نب سے دن میں 10سے 12گھنٹے کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ نے اہل علا قہ کا جینا حرام کر رکھا ہیں ایک طرف گرمی اپنے آب وتاب سے جا ری ہیں تو دوسری جا نب واپڈاوالو ں نے ہماری پریشانیو ں میں اضا فہ کر دیا ہے جس کی وجہ سے گھروں میں مو جو د خواتین اور بچے شدید مشکلات سے دوچار ہیں وہی دکانوں اور فیکٹریوں میں کا م کرنے والے بھی اس سے کا فی حد تک متا ثر ہو رہے ہیں جو کہ سراسر نا انصا فی ہیں جس کے خلاف متعدد بار واپڈا کے اعلیٰ حکام کو درخواستیں اور شکایا ت جمع کرا چکے ہیں مگر افسوس کے تا حا ل کو ئی شنوائی نہیں ہو سکی ہیں انہوں نے حکومت اور واپڈا کے اعلیٰ حکام سے مطا لبہ کیا ہے کہ ہماری لائن جی ٹی روڈ کے ساتھ منسلک کی جا ئے بصورت دیگر احتجاج کا دائرہ کا ر وسیع کرنے پر مجبور ہو جا ئینگے   ٭ گنج چوک کے رہا ئشیوں اور تا جروں نے بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے خلا ف گزشتہ روز گنج گیٹ میں احتجاجی مظا ہرہ کیا مظاہرہ کی قیا دت گنج بازار کے صدر حا مد فردوس،جلیل خان اور دیگر کر رہے تھے اس دوران مظا ہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اور بینرز اُٹھا رکھے تھے جن پر واپڈا کے خلاف مختلف قسم کے نعرے درج تھے مقررین کا کہنا تھا کہ گزشتہ ایک ما ہ سے واپڈا کی جا نب سے دن میں 10سے 12گھنٹے کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ نے اہل علا قہ کا جینا حرام کر رکھا ہیں ایک طرف گرمی اپنے آب وتاب سے جا ری ہیں تو دوسری جا نب واپڈاوالو ں نے ہماری پریشانیو ں میں اضا فہ کر دیا ہے جس کی وجہ سے گھروں میں مو جو د خواتین اور بچے شدید مشکلات سے دوچار ہیں وہی دکانوں میں کا م کرنے والے بھی اس سے کا فی حد تک متا ثر ہو رہے ہیں جس کے خلاف متعدد بار واپڈا کے اعلیٰ حکام کو درخواستیں اور شکایا ت جمع کرا چکے ہیں مگر افسوس کے تا حا ل کو ئی شنوائی نہیں ہو سکی ہیں جو کہ سراسر نا انصا فی ہیں انہوں نے حکومت اور واپڈا کے اعلیٰ حکام سے مطا لبہ کیا ہے کہ ہماری لائن کو ہزار خوانی کے بجا ئے سٹی کے ساتھ منسلک کی جا ئے بصورت دیگر احتجاج کا دائرہ کا ر وسیع کرنے پر مجبور ہو جا ئینگے   ٭پشاور کے علاقہ شاہین مسل تاون میں بجلی کی ناروا لوڈشیڈڈنگ نے علاقہ مکینوں کا جینا حرام کر کے رکھ دیا علاقہ عمائدین نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ دو دن کے اندر اندر بجلی کی لوڈشیڈڈنگ کا مسلہ ختم کرنے کیلئے اقدامات کریں بصورت دیگر جی ٹی روڈ کو ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بند کر کے احتجاج پر مجبور ہونگے جسکی تمام ذمہ داری حکومت پر عائد ہوگی اس سلسلے میں گزشتہ روز علاقہ کے عمائدین کا ہنگامی اجلاس منعقد ہوا جسمیں کثیر تعداد میں علاقہ کے عوام نے شرکت کی اجلاس سے خطاب میں سابقہ کونسلر شمس الدین نے کہا کہ جون کے مہینے سے ہی ظالمانہ اور طویل بجلی لوڈشیڈڈنگ کا سلسلہ جاری ہے جبکہ علاقہ میں شدید گرمی میں 12گھنٹے کی لوڈشیڈنگ سے گھروں میں جینا مشکل ہو گیا جبکہ پانی کی قلت سمیت بیمار،خواتین اور بچے بھی گرمی سے رل گئے تاہم واپڈا حکام اس حوالے سے خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے اور متعدد بار متعلقہ حکام کو درخواستیں بھی دی لیکن کوئی شنوائی نہیں ہوئی علاقہ عمائدین نے دو دن کا الٹی میٹم دے کہ بجلی لوڈشیڈنگ کا مسلہ فوری حل کیا جائے بصورت دیگر جی ٹی روڈ کو بند کر کے احتجاج ریکارڈ کرینگے جسکی تمام تر ذمہ داری متعلقہ حکام پر عائد ہوگی ٭  شبقدر میں شدید گرمی اور حبس کے ساتھ ساتھ مختلف فیڈروں پر صبح سے لیکر شام تک غیر اعلانیہ طور پر بجلی بند۔ متعدد بچے اور بوڑھے گرمی سے بے ہوش۔مختلف علاقوں میں بجلی بند ہونے کی وجہ سے پانی کی شدید قلت عوام شدید گرمی سے بل بلا اٹھے پیر کے روز شبقدر کے مختلف فیڈر فاطمہ،خیل حلیمزئی،خواجہ وس، مچنی ون اور کانگڑہ سمیت دیگر فیڈر پر صبح سے لیکر شام تک بجلی بند رہی مسلسل بجلی بندش کی وجہ سے گھروں اور مساجد  میں پانی بھی ناپید رہی جبکہ شدید گرمی، حبس اور پسینے کی وجہ سے متعدد بوڑھوں اور بچوں کی حالت غیر ہو گئی تھی۔ واپڈا والوں نیغیر اعلانیہ طور پر بجلی بند کر کے عوام کو شدید گرمی کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا تھا۔ دوسری طرف واپڈا ذرائع کے مطابق پشاور میں واقع بڑے گرڈ اسٹیشن شیخ محمدی میں فنی خرابی کی وجہ سے بجلی بند تھی٭پبی میں واپڈا کی ناروا لوڈ شیڈنگ کے خلاف عوام سڑکوں پر نکل آئے عوام نے جی ٹی روڈ کو بند کردیا عوام نے کہا کہ مسلسل ہر گھنٹے بعد  تین تین اور چار چار گھنٹے لوڈ شیڈنگ نے عوام کا جینا حرام کر دیا ہیں شدید گرمی میں غیر اعلا نیہ لو ڈ شیڈ نگ نے مشکلات میں مزید اضا فہ کیا ہے بچے بوڑھے شدید گرمی سے بیمار ہوگئے پینے کی پانی کی ایک ایک بوند کے لیے لوگ ترس رہے ہیں  اور حکو مت نے اس پر خا مو شی اختیار کی ہے جو عوام کے ساتھ شد ید ظلم ہیاس کا نو ٹس لیاور عوام کو غیر اعلا نیہ لو ڈ شیڈ نگ سے نجا ت دلا ئیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -