مہمند،میاں منڈی منشیات فروشوں کیخلاف قومی اتحاد کا مظاہرہ 

مہمند،میاں منڈی منشیات فروشوں کیخلاف قومی اتحاد کا مظاہرہ 

  

 مہمند(نمائندہ پاکستان)میاں منڈی اور غلنئی بازار میں منشیات کے خلاف سماجی اور فلاحی تنظیم قومی اتحاد برائے انسداد منشیات کے زیر اہتمام احتجاجی واک اور مظاہرے۔منشیات سمگلروں کے خلاف پولیس کی خاموشی معنی خیز ہے،ڈرگ مافیا کو کھلی چھٹی دی گئی ہے فوری کاروائی کرکے سگلروں کے نام منظر عام پر لائیں۔احتجاجی مظاہرین۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز علاقے میں آئس نشہ کی بڑھتی ہوئی رجحان کے پیش نظر سماجی،فلاحی تنظیم قومی اتحاد برائے منشیات کے زیر اہتمام میاں منڈی بازار اور ہیڈ کوارٹر غلنئی میں احتجاجی واک اور مظاہرے ہوئے۔مظاہرین نے ہاتھوں میں مختلف پلے کارڈ اٹھارکھے تھے۔جن پر منشیات اور ڈرگ سگلروں کے خلاف نعرے درج تھے۔ اورمنشیات، ڈرگ مافیا پر پولیس خاموشی کے خلاف شدید نعرہ بازی کررہے تھے۔مہمندپریس کلب کے سامنے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے۔تنظیم کے راہنماؤں گل نواز خان اور حمید اللہ نے کہا۔کہ آئس سمیت ہیروئن سے علاقے کے پندرہ فیصد گھرانے متاثرہ ہوئے ہیں۔اور نشہ افراد کی تعداد روز بروز بڑھتی جارہی ہیں۔اس کے برعکس منشیات اور ڈرگ ڈیلر کی خلاف پولیس کی خاموشی معنی خیز ہیں۔جبکہ منشیات کے خلاف ہماری جدوجہد پشاور اور چارسدہ سمیت ضلع مہمند میں جاری رہے گا۔انہوں نے پولیس فورس سے ڈرگ ڈیلروں کے نام منظر عام پر لانے کاپرزور مطالبہ کیا۔اور کہا کہ ہمارے اصلاح کیلئے دوسرے ممالک سے مسیحا بن کر نہیں آتے۔بلکہ ہم خود اس کے خلاف جہاد کریں گے۔جن تمام قوم ہمارے ساتھ دیں۔انہوں نے حکومت سے نشہ سموکر کے علاج کے لئے ہسپتالوں میں خصوصی وارڈ قائم کرنے کی اپیل کی۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -