ڈیرہ ڈویژن میں 199جلوس،603مجالس انتہائی حسا س قرار

 ڈیرہ ڈویژن میں 199جلوس،603مجالس انتہائی حسا س قرار

  

 ڈیرہ غازیخان (سٹی رپورٹر،نمائندہ خصوصی) حکومت پنجاب کی ہدایت پر ضلعی انتظامیہ ڈیرہ غازیخان نے محرم الحرام کے انتظامات کو مانیٹر کرنے کیلئے اسسٹنٹ کمشنرز کو فوکل پرسن مقرر کر دیاہے. پولیٹیکل اسسٹنٹ تحصیل کوہ سلیمان میں انتظامات کے ذمہ دار ہوں گے ڈپٹی(بقیہ نمبر48صفحہ7پر)

 کمشنر طاہر فاروق نے ضلع میں فرقہ وارانہ ہم آہنگی کی فضا برقرار رکھنے کیلئے 14علماء اور ذاکرین کے بیانات پر پابندی عائد کر دی ہے. نوٹیفکیشن کے مطابق جن علماؤ ذاکرین پر پابندی لگائی گئی ہے ان میں محمد مظہر الحق قاسمی، قاری نذیر احمد، حاجی یار محمد،انور حیدر، مفتی عبدالرحمان خالد، قاری عنایت اللہ، قاری رفیق احمد، غلام فرید طیب، عبدالمتین، قاری سعید احمد، علامہ شاہد حسین قمی، سجاد حسین المعروف خمینی، مظہر حسین اور ماسٹر غلام رضا شامل ہیں. علاوہ ازیں ڈپٹی کمشنر نے 25علماء اور ذاکرین کے ضلع ڈیرہ غازیخان کی ریونیو حدود میں داخلے پر بھی پابندی عائد کر دی ہے ان میں مولانا محمد احمد لدھیانوی، مولانا علی معاویہ بھائی بھائی، شہادت علی طاہر، مولانا عبدالخالق رحمانی، مولانا خلیل احمد سراج، مولانا مسرور نواز جھنگوی، اللہ نواز سرکانی، مفتی سعید ارشد الحسینی، مولانا عمر حیدر حیدری، مولانا کفایت حسین نقوی، مولانا تاج ثاقب، مولانا نعمان ضیا ء فاروقی، عبدالحمید چشتی، شوکت علی سیالوجی، مولانا یوسف رضوی المعروف ٹوکے والی سرکار، علامہ ساجد علی نقوی، علامہ حامد علی موسوی، جعفر جتوئی، قاضی شاہ مردان، مولانا محمد حسین ڈھکو، ذاکر مداح حسین شاہ، علامہ غضنفر عباس تونسوی، علامہ شہنشاہ نقوی، غیور صابر اور ڈاکٹر نزاکت عباس شامل ہیں. ڈپٹی کمشنر طاہر فاروق نے محرم الحرام کے دوران قواعد و ضوابط اور کورونا وائرس کی ایس او پیز پر عملدرآمد کیلئے تھانہ سطح کی کمیٹیاں بھی تشکیل دے دی ہیں. ڈپٹی کمشنر نے ضلع موجود اٹھارہ تھانو ں کی سطح پر تشکیل کردہ کمیٹیوں میں ریونیو عملہ کے ساتھ تمام مکاتب فکر کے نمائندوں کو شامل کیا ہے. محرم الحرام کے دوران انتظامات یقینی بنانے کیلئے متعلقہ محکمو ں کو بھی ہدایات جاری کر دی گئی ہیں. ڈپٹی کمشنر کے مراسلہ میں تمام محکموں کو بروقت انتظامات مکمل کر کے سر ٹیفکیٹ فراہم کرنے کی ہدایت کی گئی ہے. ڈپٹی کمشنر نے عاشورہ محرم کے دوران موبائل فون سروس کی معطلی پر متبادل انتظامات کی تیاریاں شروع کر دی ہیں. این ٹی سی، پی ٹی سی ایل اور دیگر محکموں کو ایمرجنسی نمبر اور لائن کی تنصیب کیلئے مراسلہ جاری کر دیا گیاہے ڈیرہ غازی خان ڈویژن میں یکم سے دسویں محرم تک 1358 جلوس اور 4641 مجالس منعقد ہوں گی جن میں 199 جلوس اور 603 مجالس کو انتہائی حساس قرار دے دیا گیا ہے چاروں اضلاع میں 42 فلیش اور 94 ٹربل سپاٹ ڈیکلیئر کردئیے گئے ہیں.حساس مجالس اور جلوسوں کیلئے سکیورٹی کے خصوصی اقدامات کرنے کا فیصلہ کرلیا گیاکمشنر ساجد ظفر ڈال اور آر پی او عمران احمر نے حکمت عملی مرتب کرلی کمشنر آفس میں اجلاس منعقد ہوا جس میں ڈپٹی کمشنر طاہر فاروق اور ڈی پی او اختر فاروق موجود تھے.کمشنر ڈیرہ غازی خان ساجد ظفر ڈال نے کہا کہ محرم الحرام کے دوران قواعد و ضوابط اور کورونا وائرس کی ایس او پیز پر عملدرآمد کرایا جائے گا۔ماسک کے بغیر داخلے اور شرکت پر پابندی ہوگی۔حساس مجالس اور جلوسوں کی خفیہ کیمروں کے ساتھ آڈیو،ویڈیو ریکارڈنگ کی جائے گی۔لاوڈ سپیکر ایکٹ اور بیانات میں اشتعال انگیزی پر بلا امتیاز سخت کارروائی ہوگی۔ آر پی او عمران احمر نے کہا کہ چاروں اضلاع میں پنجاب پولیس کاسکیورٹی پلان ترتیب دے دیا گیا ہے۔امن کمیٹی کے اراکین کے ساتھ قریبی رابطہ رکھا جائے گا.جلوس کے روٹس اور مجالس کے اوقات پر پابندی کرائی جائے گی۔ حساس مجالس اور جلوس کے گرد چھتوں پر ماہر نشانہ باز تعینات ہوں گے۔ہوٹلز،سرائے،زیر تعمیر اور بند عمارتوں کی سرچنگ سویپنگ کی جائے گی۔    ڈپٹی کمشنر طاہر فاروق اور ڈی پی او اختر فاروق نے تیاریوں سے متعلق آگاہ کیا۔ ضلع ڈیرہ غازی خان میں 228 جلوس اور 932 مجالس منعقد ہوں گی۔تین فلیش پوائنٹ اور 13 ٹربل سپاٹ قرار دئیے گئے ہیں اسی طرح ضلع لیہ میں  12 فلیش پوائنٹ،چار ٹربل سپاٹ،ضلع مظفر گڑھ میں 546 جلوس اور 1240 مجالس،16 فلیش پوائنٹ،17 ٹربل سپاٹ اور ضلع راجنپور میں 217 جلوس اور 535 مجالس منعقد ہوں گی جن میں 9 فلیش پوائنٹ قرار دئیے گئے ہیں۔

حساس قرار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -