گوجر انوالہ ، 300پولیس ہلکاروں کیخلاف 80انکوائریاں اور9مقدمات نمٹا دیئے گئے

گوجر انوالہ ، 300پولیس ہلکاروں کیخلاف 80انکوائریاں اور9مقدمات نمٹا دیئے گئے

  



گوجرانوالہ (بیورورپورٹ)پولیس ملازمین کو جھوٹے مقدمات میں ملوث کرنے کے رحجان کی حوصلہ شکنی کرتے ہوئے گوجرانوالہ ڈویژن کے 300پولیس اہلکاروں کے خلاف 80انکوائریاں اور 9مقدمات نمٹا دئیے گئے۔بعض انکوائریاں چھ سات سال سے زیرالتوا تھیں اور درخواست دہندہ افراد پولیس اہلکاروں کو بلیک میل کررہے تھے۔ تفصیلات کے مطابق ریجنل ڈائریکٹر اینٹی کرپشن فرید احمد نے گوجرانوالہ، سیالکوٹ، گجرات، منڈی بہاؤالدین، حافظ آباد اور نارووال کے اضلاع میں پولیس ملازمین کے خلاف انکوائریوں کی خفیہ تحقیقات کروائیں تو انکشاف ہوا جہاں پولیس ملازمین کے خلاف جائز شکایات ہیں وہیں ایسی درخواستیں بھی موجود ہیں جن میں درخواست دہندگان نے پولیس اہلکاروں کو بلیک میل کرنے کیلئے درخواستیں دائر کر رکھی ہیں اور اینٹی کرپشن میں پولیس اہلکاروں کے خلاف مقدمات بھی درج کروائے ہیں تاکہ ان انکوائریوں یا مقدمات کی بنیاد پر ان سے ناجائز مقاصد حاصل کئے جاسکیں اور اپنے خلاف تھانوں میں درج مقدمات پر اثر انداز ہوا جاسکے۔ ریجنل ڈائریکٹر اینٹی کرپشن فرید احمد نے اپنی نگرانی میں پولیس اہلکاروں کے خلاف انکوائریوں و مقدمات کی ازسرنو تحقیقات کروائیں جن میں 80انکوائریاں و 9مقدمات ایسے نکلے جوکہ بلیک میلنگ کیلئے تھے اور ان کی بنیاد پر پولیس اہلکاروں کو مسلسل ہراساں کیا جارہا تھا۔ ریجنل ڈائریکٹر نے اپنے خصوصی اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے ان 80انکوائریاں و 9مقدمات کو فوری نمٹا دیا۔جس باعث 300پولیس اہلکاران بلیک میلروں کے شکنجے سے آزاد ہوگئے ہیں۔ ان میں ریجن کے مختلف تھانوں کے 10ایس ایچ اوز بھی شامل ہیں۔ریجنل ڈائریکٹر اینٹی کرپشن فرید احمد نے کہا کہ کسی پولیس اہلکاروں کو شہریوں کے ساتھ زیادتی نہیں کرنے دیں گے اور کرپشن و اختیارات سے تجاوز کرنے والے اہلکاروں کو قانون کے شکنجے میں لایا جائیگا۔ اس کے ساتھ ہی کسی شہری کو اجازت نہیں دیں گے کہ وہ اینٹی کرپشن کا پلیٹ فارم استعمال کرتے ہوئے کسی سرکاری اہلکار کو بلیک میل کرے۔

انکوائریاں

مزید : علاقائی