کچہری کی منتقلی ‘ وکلاء کا احتجاج ‘ دھرنا جاری ‘ آج بھی ہڑتال

کچہری کی منتقلی ‘ وکلاء کا احتجاج ‘ دھرنا جاری ‘ آج بھی ہڑتال

  



ملتان‘خانیوال (کرائم رپورٹر‘خبرنگار خصوصی‘ بیوروز نیوز) وکلاء کی گرفتاری کا معاملہ ،ضلعی پولیس شدید اضطراب میں مبتلا ۔واضح رہے کہ پولیس نے جوڈیشل کمپیلکس میں توڑ پھوڑ کے (بقیہ نمبر15صفحہ12پر )

معاملے پر وکلاء رہنماووں پر دہشت گردی کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا تھا۔مقدمہ کے اندراج کی رات تو پولیس نے وکلا ء کی گرفتاری کے لیے ان کے گھروں پر چھاپے مارے تاہم اگلی ہی صبح وکلا ء نے سی پی او ملتان کو بذریعہ فون مطلع کیا کہ وہ ازخود گرفتاری دینا چاہتے ہیں۔ جس پر پولیس نے دھرنے سے درجن بھر سے زائد وکلاء رہنماووں کو حراست میں لے کرچہلیک تھانہ منتقل کیا تھا۔تاہم ان کی گرفتاری کے حوالے سے فیصلہ نہ ہونے پر وکلا کو تھانہ سے جانے کو کہا لیکن وکلاء گرفتاری اور مقدمہ کے اندراج کے بعد جیل بھرو تحریک کے تحت جیل سے جانے سے انکارکردیاوکلاء جیل بھرو تحریک پر عمل پیرا ہوتے ہوئے تھانہ چہلیک میں موجو د ہیں۔جس کے باعث پولیس کو روزانہ کی بنیاد پر تردیدی بیانات جاری کرنے پڑرہے ہیں۔اس بارے آر پی او ملتان کا کہنا ہے کہ وکلا ء کی گرفتاری کا فیصلہ پولیس نے کرنا ہے نا کہ وکلا نے تمام شواہد اکٹھے کرنے کے بعد مقدمہ کو فائنل کیا جائے گا۔ وکلاء کی جانب سے عدالتوں کی واپس منتقلی کے مطالبہ کے لئے دھرناچوتھے دن بھی جاری رہاہے جبکہ ٹریفک کی روانی کے لئے چوک کے اطراف کی سٹرکیں کھلی رکھی گئی ہیں۔ چوک کچہری پردئیے گئے دھرنے میں پاکستان پیپلز پارٹی سے سابق ایم پی اے محمدعثمان بھٹی،پیپلزپارٹی ملتان ڈویڑن کے سیکرٹری اطلاعات ایم سلیم راجہ،سرائیکی ڈیموکریٹک پارٹی شعبہ خواتین کی صدر عابدہ بخاری ،قومی تاجر اتحادکے صدر سلطان محمود ملک نے بھی اپنے دیگر ممبران کے ہمراہ دھرنے میں شرکت کی اوروکلاء سے اظہاریکجہتی کرتے ہوئے ان کے مطالبات جائز قراردئیے ہیں اور وکلاء کے شانہ بشانہ رہنے کااعلان کیاہے۔دریں اثناء آل پاکستان انجمن تاجران کے چیئرمین خواجہ سلیمان صدیقی نے بھی آج وفدکے ہمراہ دھرنے میں شرکت کرنے کااعلان کیاہے۔ دریں اثناء ہائیکورٹ وڈسٹرکٹ بارایسوسی ایشنز ملتان کی جانب سے ضلع کچہری سے عدالتوں کی منتقلی کے خلاف آج بھی مکمل ہڑتال کی جائیگی۔ ہائی کورٹ بار ملتان کے صدر شیر زمان کے نوٹیفکیشن کے مطابق آج بروز سوموار 18دسمبر کو تحصیل اور ضلع بار ز میں ہائی کورٹ کے ممبران وکلاء مکمل ہڑتال کریں گے یہ ہڑتال حکومتی اور پولیس رویے کے خلاف اور ملتان بار کے اظہار یکجہتی کے لئے ہڑتال ہوگی ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر