پی ٹی آئی معاملہ رفع دفع کرنے کیلئے رابطہ کر رہی ہے: قاسم گیلانی کا دعویٰ

پی ٹی آئی معاملہ رفع دفع کرنے کیلئے رابطہ کر رہی ہے: قاسم گیلانی کا دعویٰ
پی ٹی آئی معاملہ رفع دفع کرنے کیلئے رابطہ کر رہی ہے: قاسم گیلانی کا دعویٰ

  



ملتان (ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کے صاحبزادے قاسم گیلانی نے دعویٰ کیا ہے کہ اتوار اور پیر کی درمیانی شب پیش آنے والے واقعے پر پی ٹی آئی کی جانب سے ان سے رابطہ کرکے معاملہ رفع دفع کرنے کا کہا گیا ہے۔

ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں قاسم گیلانی نے کہا کہ پی ٹی آئی کی طرف سے مختلف ذرائع سے روابط کے ذریعے علی موسیٰ گیلانی سے کہا جارہا ہے کہ وہ عمران خان سمیت دیگر کے خلاف مقدمہ درج نہ کرائیں، پی ٹی آئی کی جانب سے حملے کا جھوٹا پراپیگنڈا کیا گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ پی ٹی آئی والوں کی غنڈہ گردی دیکھنا بہت بڑی بدقسمتی ہے، وہ بہت ہی تیزی اور لاپرواہی کے ساتھ ڈرائیونگ کر رہے تھے جس کے دوران انہوں نے میرے بھائی کی گاڑی کے علاوہ دیگر کو بھی ٹکر ماری۔ پی ٹی آئی والوں نے کئی گاڑیوں کو ٹھوکنے کے بعد رکنا گوارا نہیں کیا اور جب رکے تو فائرنگ کردی۔

قاسم گیلانی نے دعویٰ کیا کہ عمران خان کے قافلے کی زد میں ان کے بھائی علی موسیٰ گیلانی کی گاڑی کے علاوہ ایک ٹویوٹا کرولا نمبر 3498 ، ہونڈا سوک نمبر 5689 ، سیاہ ٹویوٹا 8245 نمبری اور ایک سوزوکی کلٹس بھی آئیں۔

واضح رہے کہ پی ٹی آئی کی جانب سے الزام عائد کیا گیا تھا کہ اتوار اور پیر کی درمیانی شب پتوکی کے قریب سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کے صاحبزادے علی موسیٰ گیلانی نے عمران خان کے قافلے پر حملہ کیا ہے۔ علی موسیٰ کی جانب سے فائرنگ کی گئی جس کی زد میں عمران خان سے پچھلی گاڑی آئی تاہم سوار محفوظ رہے۔ پی ٹی آئی کے الزام کے جواب میں علی موسیٰ گیلانی نے رات گئے ایک پریس کانفرنس کرکے کہا تھا کہ عمران خان کے گارڈز کی جانب سے ان پر حملہ کیا گیا تھا۔

مزید : قومی