ٹیکس کی وصولی میں اضافے کیلئے اقدامات اٹھائے جائیں،مکیش کمار

      ٹیکس کی وصولی میں اضافے کیلئے اقدامات اٹھائے جائیں،مکیش کمار

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر) سندھ کے وزیر برائے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات اور پارلیمانی امور مکیش کمار چاؤلہ نے متعلقہ افسران سے کہا ہے کہ وہ مالی سال-20 2019 کے مطلوبہ اہداف کے حصول میں پروفیشنل ٹیکس کی وصولی کو تیز کرنے کے لئے حکمت عملی تیار کریں۔ ذاتی کوششیں بروئے کار لائیں اور اس مقصد کے حصول کے لئے خود کو متحرک کریں اور جو افسران/عملے کے ارکان تفویض کردہ اہداف حاصل کرنے سے قاصر رہیں گے تو ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ یہ بات انہوں نے آج اپنے دفتر میں ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔ سیکریٹری ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات عبدالحلیم شیخ، ڈائریکٹر جنرل شعیب احمد صدیقی اور دیگر افسران نے بھی اجلاس میں شرکت کی۔ اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے ڈائریکٹر جنرل ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات شعیب احمد صدیقی نے بتایا کہ پروفیشنل ٹیکس نیٹ میں نئے یونٹوں کو لانے کے لئے حکومت پاکستان، نیم حکومت اداروں، خود مختار اداروں اور نیم خودمختار اداروں کو جو پاکستان کو سیکیورٹی ایکسچینج کمپنیز میں رجسٹرڈ ہیں ان کو خطوط ارسال کیے گئے ہیں لیکن ابھی تک کوئی جواب موصول نہیں ہوا۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات اور پارلیمانی امور مکیش کمار چاؤلہ نے انہیں اس معاملے پر دوبارہ مراسلے لکھنے اور ٹیکس نیٹ میں لانے کے لئے چھوٹے تاجروں / الیکٹرانک مارکیٹ ایسوسی ایشن کے ساتھ میٹنگ کرنے کا مشورہ دیا۔ انہوں نے تعاون نہ کرنے اور اپنے فرائض احسن طریقے سے نہ انجام دینے والے افسران / عملہ کی فہرست مرتب کرنے کی ہدایت جو ٹیکس وصولی کے ماہانہ اہداف کو حاصل کرنے میں ناکام رہے ہیں، اور مجاز اتھارٹی سے ان کے خلاف کارروائی کی سفارش کرنے کو کہا۔ مکیش کمار چاؤلہ نے کہا کہ معیاری آپریٹنگ طریقہ کار (ایس او پی) کے مطابق کمپیوٹر سسٹم میں تمام ادا شدہ چالانوں کو فوری طور پر اپ ڈیٹ اور توثیق کی جائے تاکہ کسی بھی قسم کی بدعنوانی نہ کی جاسکے اور وہ اس سلسلے میں کوئی بھی غفلت یا لاپروائی برداشت نہیں کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا اولین فرض ہے کہ ہم۔ ٹیکس وصولی کے اہداف کو بروقت اور مثبت طور پر حاصل کریں۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر