سندھ لیگل ایڈوائزری کال سینٹر کی سالانہ رپورٹ جاری

      سندھ لیگل ایڈوائزری کال سینٹر کی سالانہ رپورٹ جاری

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر)محکمہ ء قانون حکومت سندھ اور لیگل ایڈ سوسائٹی(LAS) نے سرکاری طور پر سندھ لیگل ایڈوائزری کال سینٹر(SLACC) کی سالانہ رپورٹ جاری کر دی ہے،جس کا تعلق پاکستان میں عائلی قوانین سے ہے۔ایس ایل اے سی سی،حکومت سندھ کے محکمہ ء قانون اور ایل اے ایس کے درمیان ایک بے مثال پبلک پرائیویٹ شراکت داری ہے۔عام لوگ مفت قانونی مشورہ اور رہنمائی کے لیے SLACC سے ٹول فری فون نمبر(0800-70806) پر رابطہ کر سکتے ہیں۔اس سوسائٹی کا مقصد معاشرے کے کم مراعات یافتہ طبقوں میں قانونی شعور کو بڑھانا اور انھیں انصاف تک رسائی دینا ہے۔رپورٹ پیش کرنے کی تقریب سے حکومت سندھ کے مشیر قانون بیرسٹر مرتضیٰ وہاب، ملیحہ ضیا،نائمہ قمر،محکمہ قانون حکومت سندھ کے سیکرٹری شارق احمد،CPLC کے سربراۃمحمد زبیر حبیب اور SLACCکے چیف لیگل ایڈوائزر جسٹس عارف خلجی نے خطاب کیا۔بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ" SLACC کے وکیل قانونی معلومات اور مشورے دینے کے لیے تربیت یافتہ ہیں اور وہ مختلف خدمات فراہم کرنے والوں، غیر حکومتی تنظیموں اور سرکاری اداروں کے بارے میں بھی بتائیں گے،قانونی مشورہ24 گھنٹے کسی بھی وقت حاصل کیا جا سکتا ہے"۔اس موقع پر سالانہ رپورٹ کی مصنفین ملیحہ ضیا اور نائمہ قمر نے عائلی قوانین اور صنفی کردار کے بارے میں SLACC کی ریسرچ سے آگاہ کیا۔اس رپورٹ میں 233 کیسز کا تجزیہ شامل ہے،جن کی اعلی عدالتوں میں سماعت ہوئی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...