ملکی معاشی اشاریے مثبت، راوی اور آئی لینڈ سٹی سے روز گار کے مواقع بڑھیں گے: وزیراعظم 

  ملکی معاشی اشاریے مثبت، راوی اور آئی لینڈ سٹی سے روز گار کے مواقع بڑھیں گے: ...

  

 اسلام آباد(نیوزایجنسیاں)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ تمام معاشی اشاریے مثبت سمت میں جا رہے ہیں، چھوٹی صنعتوں کے فروغ کے لیے مقرر اہداف جلد مکمل کرنے کی ضرورت ہے۔گزشتہ روزوزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت قومی رابطہ کمیٹی برائے اسمال اینڈ میڈیم انٹرپرائزز کا اجلاس ہوا جس میں وفاقی وزیر خزانہ حفیظ شیخ، وزیر صنعت حماد اظہر، معاون خصوصی عثمان ڈار، چیئرمین سرمایہ کاری بورڈ، صنعت، کامرس، خزانہ، توانائی، پیٹرولیم اور قانون ڈویژن کے سیکریٹریز بھی شریک ہوئے۔اجلاس میں بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ ایس ایم ایز کو مالی معاونت دینے کے لیے تمام شراکت داروں سے مشاورت ہو رہی ہے، اس ضمن میں ایس ایم ای فنڈ بھی قائم کیا جائیگا۔ چھوٹے اور درمیانے کاروباری طبقے کی سہولت کے لیے ٹیکس فارم آسان بنایا جا رہا ہے، سمیڈا کی استعداد بڑھانے کے لیے تنظیم نو کی جا رہی ہے تاکہ کاروباری طبقے کو معاونت دی جائے۔ صوبوں میں ورکنگ گروپس قائم ہو چکے ہیں جو چھوٹے اور درمیانے کاروبار کو مدد دیں گے۔اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ چھوٹے اور درمیانے درجے کے کاروبار معیشت کا اہم جزو ہیں، اس سے معیشت مستحکم ہو گی اور روزگار کے مواقع بڑھیں گے۔تمام معاشی اشاریے مثبت سمت میں جا رہے ہیں، ان میں مزید بہتری کے لیے ایس ایم ایز کا فروغ ضروری ہے۔علاوہ ازیں وزیر اعظم کی زیر صدارت قومی رابطہ کمیٹی برائے ہاؤسنگ، تعمیرات و ڈویلپمنٹ کا ہفتہ وار اجلاس بھی ہو ا جس میں کمرشل بنکوں کے سربراہوں نے بھی شرکت کی۔اس موقع پر وزیر اعظم نے تعمیرات کو فروغ دینے پر کمرشل بینکوں کی طرف سے تعاون کو سراہتے ہوئے کہا کہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ غریب آدمی کو اپنا گھر بنانے کے لیے کمرشل بینک قرضے فراہم کر رہے ہیں جو کہ خوش آئند ہے، تعمیرات سیکٹر کا فروغ اور غریب طبقے کو اپنی چھت فراہم کرنا ایک قومی خدمت ہے،آگاہی مہم مزید تیز کی جائے۔گورنر اسٹیٹ بینک نے بتایا کہ تمام کمرشل بنکوں کے ساتھ مل کر اسٹیرنگ کمیٹی بنائی گئی ہے جس میں آسان قرضوں کے حصول کے طریقہ کار کا جائزہ لیا جاتا ہے۔ کمرشل بینکوں نے ملک بھر میں گھر تعمیر کرنے کے لیے قرضے فراہم کرنے کی سہولت شروع کر دی ہے۔دریں اثناء وزیر اعظم عمران خان کے زیر صدارت راوی اربن ڈویلپمنٹ اور پاکستان آئی لینڈ منصوبوں کا جائزہ اجلاس بھی ہوا جس میں عمران خان نے متعین کردہ وقت پر اہداف مکمل کرنے کی ہدایات دیتے ہوئے کہا ہے کہ راوی سٹی اور آئی لینڈ سٹی بہت بڑے منصوبے ہیں جن سے مقامی لوگوں کیلئے روزگار بڑھے گا اور انکی معاشی حالت بہتر ہوگی، وزیراعظم نے سرمایہ کاروں کیلئے سرمایہ کاری کانفرنس منعقد کرنے کی ہدایات دیتے ہوئے کہا کہ بیرونی سرمایہ کاروں کی ان منصوبوں میں دلچسپی سے بھرپور فائدہ اٹھانے کیلئے ایک جامع حکمت عملی سے کام کیا جائے،دونوں منصوبے شہری تعمیرات و ترقی کے حوالے سے قابل تقلید ماڈل ثابت ہونگے۔اجلاس میں بتایا گیا کہ راوی اربن سٹی منصوبے کیلئے ڈیزائن اور کنسٹرکشن کنسلٹنٹ تعینات کر دیا گیا ہے اور سرمایہ کاروں کیلئے پروگرام بھی جاری کرنے کیلئے تیاری مکمل ہے۔اسکے علاوہ پنجاب حکومت نے اصولی طور پر فنڈز جاری کرنے کی بھی منظوری دے دی ہے۔علاوہ ازیں جمعرات کو وزیراعظم سے گورنر سندھ عمران اسماعیل نے ملاقات کی اور وزیراعظم کو سندھ میں کرونا کی صورتحال، گرین لائن ریڈ لائن منصوبوں پر پیش رفت سے تفصیلی طور پر آگاہ کیا۔گورنر سندھ نے وزیراعظم کو سندھ آنے کی دعوت دی جسے انہوں نے قبول کر لیا۔جبکہ وزیراعظم عمران خان سے متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے وفد نے بھی ملاقات کی۔ذرائع کے مطابق وزیراعظم نے گلگت بلتستان حکومت میں معاہدے کے تحت ایم کیو ایم کا مشیرشامل کیے جانے کی یقین دہانی کرائی ہے۔ملاقات میں ملکی سیاسی صورتحال اور سینیٹ انتخابات پر تفصیلی گفتگو کی گئی۔متحدہ قومی موومنٹ کے اراکین کی طرف سے سینیٹ انتخابات میں مکمل حمایت کا یقین دلایا گیا۔

وزیراعظم

مزید :

صفحہ اول -